اپنا ضلع منتخب کریں۔

    ’الیکشن کراؤ ملک بچاؤ‘ عمران خان کی پارٹی پورے پاکستان میں چلائے گی مہم، کیا پی ٹی آئی کو ملے گی نئی زندگی؟

    پاکستان کے سابق وزیر اعظم عمران خان فائل فوٹو

    پاکستان کے سابق وزیر اعظم عمران خان فائل فوٹو

    پاکستان تحریک انصاف کی جانب سے ٹوئٹر پر پوسٹ کی گئی ایک ویڈیو میں سابق وزیر اعظم کو یہ کہتے ہوئے سنا جا سکتا ہے کہ ہم اس حکومت کا حصہ نہیں بننا چاہتے۔ میں اپنے تمام وزرائے اعلیٰ اور ہماری پارلیمانی پارٹی (لیڈروں) سے ملاقات کروں گا اور ہم نے فیصلہ کیا ہے کہ ہم تمام اسمبلیوں سے باہر نکلیں گے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Pakistan
    • Share this:
      پاکستان کے سابق وزیر اعظم عمران خان کی پارٹی پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) شہباز شریف حکومت پر قبل از وقت انتخابات کرانے کے لیے دباؤ ڈال رہی ہے۔ ملک بھر میں ایک اور مہم ’الیکشن کراؤ ملک بچاؤ‘ شروع کرنے کے لیے تیار ہے۔ یہ فیصلہ ایک ہفتے کے بعد سامنے آیا ہے جب خان نے کہا کہ ان کی پارٹی نے فیصلہ کیا ہے کہ موجودہ سیاسی نظام کا حصہ نہیں رہے گا اور اس کے بجائے تمام اسمبلیوں سے مستعفی ہو جائیں گے۔ جیو نیوز کی خبر کے مطابق کرکٹر سے سیاست دان بننے والے عمران خان نے اپنی رہائش گاہ پر لاہور سے تعلق رکھنے والے قانون سازوں اور عہدیداروں کے ساتھ ملاقات کے دوران مہم چلانے کا فیصلہ کیا۔

      اطلاعات کے مطابق مہم کے پہلے مرحلے میں 7 سے 17 دسمبر کے درمیان لاہور میں بڑے پیمانے پر ریلیاں اور عوامی اجتماعات دیکھنے کو ملیں گے۔ مہم کا آغاز صوبائی دارالحکومت میں حماد اظہر کے حلقے میں ایک ریلی سے ہوگا۔ 27 نومبر کو قاتلانہ حملے کے بعد اپنے پہلے احتجاجی مارچ کے دوران عمران خان نے اسلام آباد تک اپنے لانگ مارچ کو مختصر کرنے اور پاکستان کی تمام اسمبلیوں سے اپنی پارٹی کے قانون سازوں کو واپس لینے کا فیصلہ کیا۔

      پاکستان تحریک انصاف کی جانب سے ٹوئٹر پر پوسٹ کی گئی ایک ویڈیو میں سابق وزیر اعظم کو یہ کہتے ہوئے سنا جا سکتا ہے کہ ہم اس حکومت کا حصہ نہیں بننا چاہتے۔ میں اپنے تمام وزرائے اعلیٰ اور ہماری پارلیمانی پارٹی (لیڈروں) سے ملاقات کروں گا اور ہم نے فیصلہ کیا ہے کہ ہم تمام اسمبلیوں سے باہر نکلیں گے۔ اپنے ملک میں افراتفری اور تشدد پھیلانے کے بجائے بہتر ہو گا کہ ہم اس کرپٹ حکومت سے نکل جائیں۔

      یہ بھی پڑھیں: 

      تاہم 4 دسمبر کو عمران خان نے ایک پاکستانی نجی نیوز چینل کے ساتھ عمران خان کے انٹرویو میں کہا تھا کہ اگر مارچ تک انتخابات ہوتے ہیں تو پنجاب اور خیبر پختونخواہ صوبوں کی اسمبلیوں کی تحلیل کو روکنے پر آمادگی ظاہر کی۔ 70 سالہ عمران خان اس سال ان کی حکومت کے خاتمے کے بعد سے نئے انتخابات کا مطالبہ کر رہے ہیں جب انہیں اعتماد کا ووٹ کھونے کے بعد اقتدار سے بے دخل کر دیا گیا تھا۔

      عمران خان اپنے جانشین شہباز شریف اور ان کے اتحادیوں پر بھی کرپشن کے الزامات لگاتے رہے ہیں۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: