உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Exclusive: فرقہ وارانہ بدامنی کا خدشہ، ہندوستان کو نقصان پہنچانے ISI کی سازش

    ’ہندوستان میں کام کرنے والے تمام کارکنوں کو بچایا جائے‘۔

    ’ہندوستان میں کام کرنے والے تمام کارکنوں کو بچایا جائے‘۔

    ذرائع نے بتایا کہ گینگسٹر اپنے مقامی نیٹ ورک کا استعمال کرتے ہوئے پاکستان سے آنے والی منشیات اور ہتھیار ہندوستان کے مختلف حصوں میں بھیجتا رہا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ رنڈا ممکنہ طور پر لاہور کے جوہر ٹاؤن میں ودھاوا سنگھ کے ساتھ ہے جو آئی ایس آئی کی جانب سے کام کر رہا ہے۔

    • Share this:
      سی این این نیوز 18 کے ذریعے حاصل کردہ ایک انٹیلی جنس نوٹ سے پتہ چلتا ہے کہ پاکستان کی انٹر سروسز انٹیلی جنس (Pakistan’s Inter-Services Intelligence (ISI)) چاہتی ہے کہ خالصتان تحریک (Khalistan movement) ہندوستان کے دیگر حصوں میں پھیل جائے۔ اس سے ظاہر کرتا ہے کہ آئی ایس آئی کے نئے سربراہ ندیم انجم سکھ علیحدگی پسندوں کی عالمی رسائی کو ہندوستان میں بدامنی کو ہوا دینے کے لیے استعمال کرنا چاہتے ہیں۔

      نوٹ میں کہا گیا ہے کہ انجم نے لاہور میں تمام خالصتانی رہنماؤں بشمول رنجیت سنگھ نیتا اور ودھوا سنگھ ببر سے کہا ہے کہ وہ پنجاب میں مقیم غنڈوں کو ہندوستان میں ہتھیاروں کی تقسیم کے لیے منظم کریں۔ اس میں کہا گیا ہے کہ جمعرات کو ہریانہ کے ضلع کرنال میں ہتھیاروں کے ساتھ پکڑے گئے چار افراد بھی ڈرون ہتھیاروں کو گرانے والے رنگ کا حصہ ہیں۔

      انٹیل کے مطابق ہتھیاروں کو ڈرون کے ذریعے پنجاب لایا جاتا ہے اور گینگسٹر-دہشت گرد ہرویندر سنگھ 'رنڈا' کو انہیں ہندوستان کے دوسرے حصوں میں بھیجنے کا کام سونپا گیا ہے۔ سال 2021 کے لدھیانہ کورٹ دھماکہ کیس کے سلسلے میں ایجنسیوں نے بھی رندا کے نام کی تصدیق کی تھی۔

      ذرائع نے بتایا کہ گینگسٹر اپنے مقامی نیٹ ورک کا استعمال کرتے ہوئے پاکستان سے آنے والی منشیات اور ہتھیار ہندوستان کے مختلف حصوں میں بھیجتا رہا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ رنڈا ممکنہ طور پر لاہور کے جوہر ٹاؤن میں ودھاوا سنگھ کے ساتھ ہے جو آئی ایس آئی کی جانب سے کام کر رہا ہے۔

      ذرائع کے مطابق رندا خود فنڈڈ دہشت گردی کا نیٹ ورک چلا رہے ہیں اور منشیات کی فروخت کے ساتھ اسلحہ کی نقل و حرکت کے لیے فنڈنگ ​​کرتے ہیں اور مقامی نوجوانوں کو نوکری کے لیے متحرک کرتے ہیں۔ ذرائع نے بتایا کہ آئی ایس آئی ودھوا سنگھ اور رندا چاہتی ہے کہ وہ آر ڈی ایکس کے ساتھ کچھ بڑے دھماکے کریں، خوف و ہراس پھیلانے کے لیے مقامی لیڈروں کو ہلاک کریں، اور ہندو سکھ اور ہندو مسلم کشیدگی کو ہوا دینے کے مواقع تلاش کریں۔

      ذرائع نے بتایا کہ کرنال سے گرفتار کیے گئے افراد میں سے ایک گرپریت نے ایجنسیوں کو بتایا کہ اسے رندا کے کہنے پر ڈرون کے ذریعے سرحد پار سے کھیپ ملی ہے۔

      اپنی پوچھ گچھ میں ملزمان نے ایجنسیوں کو بتایا کہ انہوں نے اپریل 2022 میں بھی اسی طرح کی کھیپ ڈیلیور کی تھی۔ ذرائع کے مطابق ملزمان نے کہا کہ انہیں ڈراپ سے چھ گھنٹے پہلے ہدایات ملیں گی۔ ذرائع نے بتایا کہ ایک بار جب انہیں ہتھیار مل جاتے ہیں، تو انہیں کسی خاص جگہ یا ریاست میں لے جانے کی ہدایت کی جاتی ہے اور وہاں پہنچ کر انہیں یہ کھیپ ہندوستان کے ایک خاص عرض البلد اور عرض البلد پر بھیجنے کی ہدایت ملتی ہے۔

      ذرائع نے بتایا کہ خیال یہ ہے کہ ہندوستان میں کام کرنے والے تمام کارکنوں کو بچایا جائے، اور انگوٹھی بالکل بے چہرہ ہو جاتی ہے۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: