உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Father’s Day: ہر شخص کی زندگی میں بہت ہی خاص ہے والد! یوم والد پر خاص پیشکش

    والد کی شخصیت کا ہماری زندگی پر دیرپا اثر پڑتا ہے۔

    والد کی شخصیت کا ہماری زندگی پر دیرپا اثر پڑتا ہے۔

    آج کے معاشرہ میں ماں کی ممتا اور محبت پر تو بہت باتیں کی جاتی ہے، لیکن باپ کی قربانیوں اور بے لوثی کو اس طرح سراہیا نہیں جاتا، جیسے ماں کی خدمات و بے لوثی کو یاد کیا جاتا ہے، لیکن ہم سب کو یہ سمجھنے کی ضرورت ہے کہ ایک باپ کے کندھوں پر بہت سی ذمہ داریاں ہوتی ہیں۔

    • Share this:
      والد ہر شخص کی زندگی کی اہمیت بہت ہی خاص، اہم اور بے لوث شخصیت ہوتی ہے۔ والد کے روپ میں ہر کسی کو محبت، شفقت اور خاص لگاؤ ہوتا ہے۔ وہ ایسے شخص ہوتے ہیں جو ایک سرپرست، معاون، رہبر، محافظ اور دوست سے بھی بڑھ کر ہے۔

      آج کے معاشرہ میں ماں کی ممتا اور محبت پر تو بہت باتیں کی جاتی ہے، لیکن باپ کی قربانیوں اور بے لوثی کو اس طرح سراہیا نہیں جاتا، جیسے ماں کی خدمات و بے لوثی کو یاد کیا جاتا ہے، لیکن ہم سب کو یہ سمجھنے کی ضرورت ہے کہ ایک باپ کے کندھوں پر بہت سی ذمہ داریاں ہوتی ہیں۔ یوم والد (Father’s Day) جون کے تیسرے اتوار کو منایا جاتا ہے۔

      یوم والد کی تاریخ:

      یوم والد کا تصور اور نظریہ سونورا اسمارٹ ڈوڈ (Sonora Smart Dodd) نے پیش کیا تھا، جو سول وار کے تجربہ کار کی بیٹی تھی۔ وہ چاہتی تھی کہ ان کے والد کو خصوصی توجہ دی جائے اور ان کے نام ایک دن معنون کیا جائے۔ کیونکہ وہ اکیلا باپ تھا جس نے چھ بچوں کی پرورش کی تھی، جن میں سونورا بھی شامل تھی جب ان کی ماں کا انتقال سونورا کے بچپن میں ہی ہوگیا تھا۔ وہ مدرز ڈے پر تقریر کرنے والے خطبہ سے متاثر ہوئی اور اس نے 1909 میں دنیا بھر کے والد کو منانے کے لیے فادرز ڈے منانے کا خیال پیش کیا۔

      مقامی مذہبی رہنما اس خیال کے حامی تھے اور انہوں نے 19 جون 1910 کو پہلا فادر ڈے منانے کا فیصلہ کیا۔ جون ڈوڈ کے والد کی سالگرہ کا مہینہ بھی تھا۔

      1924 میں امریکی صدر کیلون کولج نے بھی اس دن کو منانے کی حمایت کی اور بالآخر 1966 میں صدر لنڈن بی جانسن نے اسے باضابطہ طور پر فادرز ڈے کے طور پر شروع کیا۔ صدر رچرڈ نکسن نے 1972 میں اس قانون پر دستخط کیے جس میں جون کے تیسرے اتوار کو فادرز ڈے کے طور پر نامزد کیا گیا۔ اسے عام تعطیل کا اعلان بھی کیا گیا۔

      فادرز ڈے کی اہمیت

      مزید پڑھیں: دہلی میں پھر Covid-19 کا قہر، 10 دنوں میں 7 ہزار کیسیز، انفیکشن کی شرح میں بھی اچھال

      یہ دن باپ کے معنون کیا جاتا ہے۔ خیال یہ ہے کہ والدین کی پرورش میں والد کے کردار کو پہچانا جائے اور وہ ہماری پرورش میں کتنا اہم کردار ادا کرتا ہے۔ مالی بوجھ کو سنبھالنے سے لے کر اس بات کو یقینی بنانے تک کہ ہر کوئی رات کو سکون سے سوئے، جب کہ ایک باپ ہر وقت فکر مند رہتا ہے۔

      مزید پڑھیں: UP Violence: جمعہ کی نماز سے پہلے پورے اترپردیش میں ہائی الرٹ، چپے چپے پر سیکورٹی فورسز کا پہرہ

      جیسا کہ پہلے ذکر کیا گیا ہے، وہ نہ صرف ایک محافظ ہے بلکہ یہ ایسا شخص ہیں جو اپنے خاندان کے بچوں کے لیے ایک دوست، ایک آئیڈیل اور ایک تحریک بن سکتے ہیں۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: