ہوم » نیوز » عالمی منظر

جے شنکر نے کہا۔ جموں و کشمیر کی ترقی کے بعد ناکام ہو جائیں گے پاکستان کے منصوبے

وزیر خارجہ ڈاکٹر ایس جے شنكر نے کہا ہے کہ جموں و کشمیر کی ترقی یقینی بن جانے پر اس صوبہ میں بدامنی پھیلانے کے پاکستان کے منصوبے ناکام ہو جائیں گے۔

  • UNI
  • Last Updated: Oct 02, 2019 12:34 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
جے شنکر نے کہا۔ جموں و کشمیر کی ترقی کے بعد ناکام ہو جائیں گے پاکستان کے منصوبے
جے شنکر نے کہا۔ جموں و کشمیر کی ترقی کے بعد ناکام ہو جائیں گے پاکستان کے منصوبے

واشنگٹن۔ وزیر خارجہ ڈاکٹر ایس جے شنكر نے کہا ہے کہ جموں و کشمیر کی ترقی یقینی بن جانے پر اس صوبہ میں بدامنی پھیلانے کے پاکستان کے منصوبے ناکام ہو جائیں گے۔ ڈاکٹر جے شنكر نے بدھ کو یہاں کہا کہ جموں و کشمیر کے کچھ لوگ اور سرحد پار کے ’ذاتی مفادات‘ کی وجہ سے مودی حکومت کی نئی پہل کے خلاف سخت ردعمل ہوا ہے۔

انہوں نے کہا’’جو ردعمل ہوا ہے، وہ 70 سال سے زیادہ خود غرضی کی وجہ سے ہوا ہے۔ یہ مقامی اور سرحد پار کے مفادات ہیں، لیکن ہم جموں و کشمیر کی ترقی کا انتظام کر رہے ہیں۔ آپ جانتے ہیں کہ پاکستان نے گزشتہ 70 برسوں سے اسے برباد کرنے کا منصوبہ بنایا ہے‘‘۔

جے شنكر نے امریکی تھنک ٹینک ’سینٹر فار اسٹریٹجک اینڈ انٹرنیشنل اسٹڈیز‘ میں اپنی تقریر کے بعد ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ یہ صحیح بات ہے کہ جب کوئی کسی چیز میں ضروری تبدیلی کرتا ہے تب ’ ٹرانشنل رسک ‘ برقرار رہتا ہے اور ردعمل بھی سامنے آتے ہیں۔ انہوں نے کہا’’یہ فیصلہ (مودی حکومت کا کشمیر پر فیصلہ) ایسے ہی نہیں لے لیا گیا تھا۔ یہ اس وجہ سے لیا گیا تھا کیونکہ کوئی اور راستہ نہیں تھا‘‘۔

وزیر خارجہ نے ٹوئٹ بھی کیا، "ایک مختلف دور کی تیاری کے موضوع پر آج ’سینٹر فار اسٹریٹجک اینڈ انٹرنیشنل سٹڈیز‘ میں خطاب کر کے اچھا لگا۔ کئی فریقوں کے ساتھ عملی تعاون کی سفارتکاری میں تبدیلی کی ضرورت ہے۔ ایک ہی وقت میں، مفادات اور تعلقات میں بھی توازن برقرار رکھنا ہو گا۔ دنیا کے اس نئے منظر نامے میں استقبال ہے‘‘۔ وزیر خارجہ نے اپنے خطاب میں کہا کہ دنیا کے اس نئے منظر نامے میں، ہندوستان کثیر جہتی گروپوں کے درمیان ایک رہنما کے طور پر ابھرا ہے کیونکہ ایک ہی وقت پر سیکورٹی اور ابھرتے ہوئے حالات کو لے کر اس کا موقف واضح ہے۔ انہوں نے ’ہندوستانی خارجہ پالیسی- ایک مختلف دور کی تیاری‘ موضوع پر خطاب کرتے ہوئے کہا کہ چونکہ عالمگیرسطح پرتکثیریت کی سمت میں آگے بڑھ گیا ہے لہذا عملی نتائج پر مرتکز تعاون پر کشش نظر آنا شروع ہو گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ فی الحال عالمی تجارت نے ممالک کے درمیان باہمی انحصار کی’آزادی کی بنیاد‘ فراہم کی ہے۔
First published: Oct 02, 2019 09:47 AM IST