ہوم » نیوز » عالمی منظر

حافظ سعید کے خلاف معاملہ چلانے کے لئے ادا کرنی ہوگی بڑی قیمت: سابق چیئرمین آئی ایس آئی

ممبئی حملے کے ماسٹر مائنڈ حافظ سعید پرمعاملہ چلانے کے لئے بڑی سیاسی قیمت ادا کرنی ہوگی۔ یہ بات پاکستانی خفیہ ایجنسی آئی ایس آئی کے سابق چیئرمین اسد درانی نے اپنی ایک کتاب میں کہی ہے۔

  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
حافظ سعید کے خلاف معاملہ چلانے کے لئے ادا کرنی ہوگی بڑی قیمت: سابق چیئرمین آئی ایس آئی
ممبئی حملے کے ماسٹر مائنڈ حافظ سعید پرمعاملہ چلانے کے لئے بڑی سیاسی قیمت ادا کرنی ہوگی۔ یہ بات پاکستانی خفیہ ایجنسی آئی ایس آئی کے سابق چیئرمین اسد درانی نے اپنی ایک کتاب میں کہی ہے۔

اسلام آباد: ممبئی حملے کے ماسٹر مائنڈ حافظ سعید پرمعاملہ چلانے کے لئے بڑی سیاسی قیمت ادا کرنی ہوگی۔ یہ بات پاکستانی خفیہ ایجنسی آئی ایس آئی کے سابق چیئرمین اسد درانی نے اپنی ایک کتاب میں کہی ہے۔ درانی نے یہ کتاب سابق را چیئرمین اے ایس دلت کے ساتھ مل کر لکھی ہے۔


درانی نے کہا کہ اگر آپ سعید کے خلاف معاملہ چلانا چاہتے ہیں تو پہلا ردعمل ہوگا یہ ہندوستان کے لئے ہے، آپ اسے پریشان کر رہے ہیں، وہ بے قصور ہے، وغیرہ۔ اس کی سیاسی قیمت بڑی ہے۔ اسپائی کرانکلس را آئی ایس آئی اور دی الیوشن آف پیس نام کی کتاب میں درانی اور دلت کے درمیان معمولی بات چیت کی گئی ہے، جس میں سرجیکل اسٹرائیک کل بھوشن جادھو، نواز شریف سمیت کشمیر اور برہان وانی کے موضوع شامل ہیں۔


جب دلت نے پاکستان سے سعید کی قیمت کے بارے میں دریافت کیا تو اس پر درانی نے کہا کہ اس پر معاملہ چلانے کی بڑی قیمت ادا کرنی پڑے گی۔


سعید پر دہشت گردانہ سرگرمیوں میں اس کے کردار کے لئے 10 ملین امریکی ڈالر کا انعام ہے۔ گزشتہ سال جنوری سے نومبر تک وہ ہا وس اریسٹ (نظر بند) تھا۔ اس کی تنظیم جماعت الدعوۃ کو پابندی عائد شدہ لشکر طیبہ (ایل ای ٹی) کا سربراہ سمجھا جاتا ہے جو 2008 میں ممبئی حملے کرنے کے لئے ذمہ دار ہے، جس میں 166 لوگ مارے گئے تھے۔ سعید کو ممبئی حملوں کے بعد اقوام متحدہ کی طرف سے عالمی دہشت گرد قرار دیا گیا تھا۔

کتاب میں درانی نے سعید کو حراست میں لئے جانے پر لکھا ہے کہ اسے عدالت لے جانے میں کچھ نیا نہیں تھا۔ ابھی بھی اس کا امکان ہے، اگر اسے حراست میں لیاجائے تو کوئی نیا طوفان کھڑا ہوجائے، 6 ماہ کے اندر وہ باہر آجائے گا۔

 

 
First published: May 27, 2018 05:27 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading