ہوم » نیوز » عالمی منظر

جیو نیوز کے صحافی حامد میر نے پاکستان حکومت اور فوج کی کھولی پول، اینکرنگ سے ہٹائے گئے

Hamid Mir: اس سلسلے میں حکومت کی جانب سے کوئی بیان نہیں آیا ہے لیکن صحافی تنظیم اور دیگر لوگوں نے اس قدم کی تنقید کی ہے۔ پاکستان کے انسانی حقوق کمیشن نے بھی اس قدم کی مذمت کی ہے۔

  • Share this:
جیو نیوز  کے صحافی حامد میر  نے پاکستان حکومت اور فوج کی کھولی پول، اینکرنگ سے ہٹائے گئے
پاکستان کے انسانی حقوق کمیشن نے بھی اس قدم کی مذمت کی ہے۔

پاکستان کے صحافی حامد میر (Hamid Mir)  کو پیر کو ایک نجی ٹی وی چینل نے اپنے مقبول ٹاک شو مکی اینکرنگ کرنے سے روک دیا۔ انہوں نے ایک ساتھی صحافی پر حملے کے مد نظر ملک کی فوج کی تنقید کی تھی۔ حامد میر نے جمعے کو اسلام آباد میں صحافی اسد طور پر تین نامعلوم شخص کے حملے کے خلاف صحافیوں کے ذریعے کئے گئے مخالف مظاہرے میں ایک بھڑکاؤ بیان دیا تھا۔ انہوں نے حملے میں جواب دہی طے کرنے کی مانگ کی تھی۔


حامد میر (Hamid Mir)  جیو ٹی وی پر پرائم ٹائم کیپیٹل ٹاک شو کو ہوسٹ کرتے ہیں۔ میر کو ٹی وی نیٹ ورک کے ذریعے اب چھٹی پر بھیج دیا گیا ہے۔ صحافی نے اس  واقعے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ یہ ان کے لئے نیا نہیں ہے کیونکہ انہوں نتائج کے باوجود لڑنے کی قسم کھائی ہے۔



انہوں نے ٹویٹ کیا، میرے لئے کچھ بھی نیا نہیں ہے، مجھ پر  پہلے بھی دو بار پابندی لگائی گئی تھی۔  دو بار نوکری کھوئی، میں آئین میں دئے گئے حقوق کیلئے آواز اٹھانا بند نہیں کر سکتا۔ اس بار میں کسی بھی نتیجے کیلئے تیار ہوں اور کسی بھی حد تک جانے کیلئے تیار ہوں کیونکہ وہ میرے کنبے کو دھمکی دے رہے ہیں۔


اس سلسلے میں حکومت کی جانب سے کوئی بیان نہیں آیا ہے لیکن صحافی تنظیم اور دیگر لوگوں نے اس قدم کی تنقید کی ہے۔ پاکستان کے انسانی حقوق کمیشن نے بھی اس قدم کی مذمت کی ہے۔


بتادیں کہ 25 مئی کو اسلام آباد میں پاکستان کے صحافی اسد علی طور پر تین نامعلوم لوگوں نے حملہ کیا تھا۔ اسد کے مطابق یہ تینوں بندوق کی نوک پر انہیں بیڈ رو میں لے گئے اور پھر انہیں مارا گیا۔ ایک حملہ آور نے بتایا کہ وہ آئی ایس آئی کا ممبر ہے۔ اسد سے پوچھا گیا کہ انہیں فنڈ کہاں سے ملتے ہیں ۔ ساتھ ہی انہیں دھمکی دی گئی کہ اگر وہ پاکستان کی تعریف نہیں کرے گا تو انہیں موت کے گھاٹ اتار دیا جائے گا۔
Published by: Sana Naeem
First published: Jun 01, 2021 01:35 PM IST