உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    حج 2020: عازمین حج کا سعودی عرب کے مختلف شہروں سے مکہ المکرمہ پہنچنا شروع

    حج 2020: عازمین حج کا سعودی عرب کے مختلف شہروں سے مکہ المکرمہ پہنچنا شروع

    حج 2020: عازمین حج کا سعودی عرب کے مختلف شہروں سے مکہ المکرمہ پہنچنا شروع

    خیال رہے کہ وزارت حج و عمرہ کی ہدایت پر عازمین کے استقبال کے موقع پر احتیاطی تدابیر پر سختی سے عمل کیا جا رہا ہے۔

    • Share this:
      الریاض۔ حج کی سعادت حاصل کرنے کے لئے عازمین حج سعودی عرب کے مختلف شہروں سے مکہ المکرمہ پہنچنے لگے ہیں۔ عازمین حج مدینہ منورہ، ریاض، تبوک اور جازان سے مکہ المکرمہ پہنچے۔ حجاج کرام منی روانگی سے قبل مکہ مکرمہ میں 8 ذی الحجہ تک قرنطینہ میں رہیں گے۔ خیال رہے کہ وزارت حج و عمرہ کی ہدایت پر عازمین کے استقبال کے موقع پر احتیاطی تدابیر پر سختی سے عمل کیا جا رہا ہے۔

      کووڈ 19 وبائی بیماری کی وجہ سے اس سال عازمین حج کی تعداد محدود رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ عرب نیوز کے مطابق، تقریبا 10،000 عازمین اس سال حج کی سعادت حاصل کریں گے۔

      واضح رہے کہ سعودی حکومت نے 24 جون کو اعلان کیا تھا کہ کورونا وائرس کے باعث عازمین کی تعداد کو محدود رکھتے ہوئے صرف سعودی عرب میں مقیم غیر ملکیوں کو حج کی اجازت دی جائے گی۔ وزارت حج کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا تھا کہ ’’ہجوم اور لوگوں کی بڑی تعداد جمع ہونے سے کورونا کے پھیلنے کے خطرے کے پیش نظر فیصلہ کیا گیا ہے کہ رواں برس حج محدود عازمین کے ساتھ ہوگی‘‘۔ بیان میں کہا گیا تھا کہ’’سعودی عرب میں مقیم مختلف ممالک کے شہری حج کی ادائیگی کرپائیں گے اور یہ فیصلہ حج کو محفوظ طریقے سے ادا کرنے کے لئے کیا گیا ہے‘‘۔ سعودی حکومت نے کہا تھا کہ ’’صحت عامہ کے پیش نظر لوگوں کی جانوں کو بچانے کے لیے اسلامی تعلیمات کے مطابق سماجی فاصلہ اور دیگر تمام ضروری اقدامات کو یقینی بنانے کے لیے یہ فیصلہ کیا گیا ہے‘‘۔


      خیال رہے کہ حج کی ادائیگی کے لئے دنیا بھر سے لاکھوں مسلمان ہر سال سعودی عرب جاتے ہیں اور رپورٹس کے مطابق گزشتہ برس تقریباً 25 لاکھ مسلمانوں نے حج ادا کیا تھا۔ رواں برس کورونا وائرس کے باعث سعودی عرب کے علاوہ دیگر ممالک کے عازمین سعادت حج سے محروم رہیں گے۔
      Published by:Nadeem Ahmad
      First published: