ہوم » نیوز » عالمی منظر

یمن کے حوثی باغیوں کا دعویٰ۔ سعودی عرب کے 500 فوجیوں کو گھر میں گھس کر مارا

بتا دیں کہ پچھلے دنوں سعودی عرب میں آرامکو کی دو بڑی تیل تنصیبات پر حوثی باغیوں نے ڈرون حملہ کیا تھا۔ اس کی وجہ سے ان تنصیبات میں آگ لگ گئی تھی۔

  • Share this:
یمن کے حوثی باغیوں کا دعویٰ۔ سعودی عرب کے 500 فوجیوں کو گھر میں گھس کر مارا
یمن میں 2015 سے لڑائی جاری ہے

یمن کے حوثی باغیوں نے دعویٰ کیا ہے کہ انہوں نے سعودی عرب میں اس کی سرزمین پر سینکڑوں فوجیوں پر حملہ کر دیا ہے۔ اس حملے میں تقریبا 500 فوجیوں کی موت ہو گئی جبکہ سینکڑوں زخمی ہیں۔ کہا جا رہا ہے کہ اس حملے میں سعودی عرب کے کئی فوجیوں کو یرغمال بھی بنایا گیا ہے۔ حوثی باغیوں نے ان دعووں کے ساتھ ویڈیو اور فوٹو بھی شئیر کیا ہے۔

اس درمیان سعودی عرب کے ساتھ لڑائی کے بیچ حوثی باغیوں نے امن کی بھی پیشکش کی ہے۔ حوثی باغیوں کے حامی ٹی وی چینلوں نے بتایا کہ باغیوں نے 350 قیدیوں کو بغیر کسی شرط چھوڑنے کا اعلان کیا ہے۔ کہا جا رہا ہے کہ حوثی باغیوں کو ایران کی حمایت حاصل ہے۔

بتا دیں کہ پچھلے دنوں سعودی عرب میں آرامکو کی دو بڑی تیل تنصیبات پر حوثی باغیوں نے ڈرون حملہ کیا تھا۔ اس کی وجہ سے ان تنصیبات میں آگ لگ گئی تھی۔ رپورٹوں میں بتایا گیا ہے کہ وہاں تیل کے پروڈکشن میں ہر دن 50 لاکھ بیرل کی کمی آئی ہے۔ یہ سعودی عرب کے کل تیل پروڈکشن کا نصف حصہ ہے۔ ایسے میں عالمی بازار میں تیل کی قیمتوں میں بھاری اضافہ ہو رہا ہے۔

First published: Oct 02, 2019 09:24 AM IST