ہوم » نیوز » عالمی منظر

نیپال: نئے نقشے کی مخالفت کرنے والی خاتون رکن پارلیمنٹ کے گھر پر حملہ، ملک چھوڑنے کی ملی دھمکی

سریتا گری نیپال کی سماج وادی پارٹی کی لیڈر ہیں۔ انہوں نے نقشے میں تبدیلی کو لے کر آئینی ترمیمی بل کی زبردست مخالفت کی تھی۔

  • Share this:
نیپال: نئے نقشے کی مخالفت کرنے والی خاتون رکن پارلیمنٹ کے گھر پر حملہ، ملک چھوڑنے کی ملی دھمکی
سریتا گری

کاٹھمنڈو۔ نیپال  (Nepal) کی پارلیمنٹ میں دو دن پہلے نقشے میں تبدیلی کو لے کر آئینی ترمیمی بل پاس کرایا گیا۔ اس دوران وہاں کی ایک خاتون رکن پارلیمنٹ سریتا گری  (Sarita Giri) نے اس ترمیم کی زبردست مخالفت کی تھی۔ اب خبر ہے کہ اس رکن پارلیمنٹ کے گھر پر حملہ ہوا ہے۔ میڈیا رپورٹوں کے مطابق، انہیں ملک چھوڑنے کی دھمکی دی گئی ہے۔ ساتھ ہی ان کے گھر کے باہر کالے جھنڈے لگا دئیے گئے ہیں۔ کہا جا رہا ہے کہ شکایت کے بعد بھی پولیس ان کی مدد کے لئے نہیں پہنچی۔


سریتا گری نیپال کی سماج وادی پارٹی کی لیڈر ہیں۔ انہوں نے نقشے میں تبدیلی کو لے کر آئینی ترمیمی بل کی زبردست مخالفت کی تھی۔ آئینی ترمیم کی تجویز پر اپنا الگ سے ترمیمی تجویز پیش کرتے ہوئے گری نے اسے مسترد کرنے کی مانگ کی تھی۔ انہوں نے واضح طور پر کہا تھا کہ چین کے اشاروں پر نیپال نقشے میں تبدیلی چاہتا ہے۔ سریتا گری نے یہ بھی دعویٰ کیا تھا کہ نیپال کے لوگ خود نہیں چاہتے ہیں کہ نقشے کو لے کر ہندوستان کے ساتھ کوئی تنازعہ ہو۔ ان کی رائے تھی کہ نیا نقشہ جاری کرنے سے پہلے نیپال کو ہندوستان اور چین سے بات کرنی چاہئے تھی۔


سریتا گری کو دھمکی


سریتا گری کے نیپال مخالف رخ کے بعد ان کے خلاف سخت کارروائی کی مانگ کی گئی ہے۔ نیشنل یوتھ ایسوسی ایشن  (NYA)  نے ایک بیان جاری کرتے ہوئے کہا کہ ملک کے جذبات کو ٹھیس پہنچانے کے لئے ان کے خلاف کارروائی کی جائے۔ اتنا ہی نہیں، این وائی اے نے انہیں پارلیمنٹ سے فورا برخاست کرنے کی مانگ کی تھی۔ ان کی پارٹی نے بھی ان سے کنارہ کر لیا ہے۔ پارٹی نے ان کو فوری طور پر یہ ترمیمی تجویز واپس لینے کا حکم دیا ہے۔
First published: Jun 11, 2020 09:03 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading