உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Facebook: فیس بک پروٹیکٹ کو ایکٹیو کرنا ہوگا ضروری! نہیں تو آپ کا اکاؤنٹ ہوسکتا ہے ڈیلیٹ

    روس میں فیس بک کے خلاف اٹھایا گیا یہ بڑا قدم۔

    روس میں فیس بک کے خلاف اٹھایا گیا یہ بڑا قدم۔

    یہ اصل میں اسپام نہیں تھا، فیس بک نے صارفین کو ای میل بھیجی تھی۔ فیس بک پروٹیکٹ کو ایکٹیویٹ کرنے کی آخری تاریخ 17 مارچ تھی لیکن زیادہ تر لوگوں نے ای میل کو نظر انداز کر دیا اور اب وہ اپنے اکاؤنٹ سے لاک آؤٹ ہو چکے ہیں۔ ایک فیس بک صارف، جو اولیویا تھیسن کے نام سے جانا جاتا ہے، نے ٹویٹر پر پوسٹ کیا کہ آج فیس بک سے غیر معینہ مدت کے لیے میرا اکاونٹبند ہو گیا ہوں۔

    • Share this:
      کیا آپ کے پاس فیس بک پروٹیکٹ (Facebook Protect) ایکٹیویٹ ہے؟ اگر نہیں تو فیس بک آپ کو آپ کے اکاؤنٹ سے لاک آؤٹ کر سکتا ہے۔ اس سے قبل 2021 میں فیس بک نے فیس بک پروٹیکٹ متعارف کرایا تھا، جو کہ ان لوگوں کے لیے سیکیورٹی کی ایک اضافی پرت ہے جو بدنیتی پر مبنی ہیکرز بشمول انسانی حقوق کے محافظوں، صحافیوں اور سرکاری اہلکاروں کے ذریعے بہت زیادہ نشانہ بناتے ہیں۔

      اس دوران متعدد صارفین ٹارگٹڈ کیٹیگری کے تحت آتے ہیں۔ انھیں ’آپ کے اکاؤنٹ کو فیس بک پروٹیکٹ سے ایڈوانس سیکیورٹی کی ضرورت ہے‘ کے عنوان سے ای میلز موصول ہوئیں اور ان سے فیس بک پروٹیکٹ فیچر آن کرنے کو کہا ورنہ فیس بک انہیں ان کے اکاؤنٹ سے لاک آؤٹ کر دے گا۔

      Explained: آخر کون ہے جنگی مجرم؟ کون کرے گا فیصلہ؟ ولادیمیر پوتن جنگی مجرم ہے؟



      فیس بک نے کہا کہ سیکیورٹی میں ہماری جاری بہتری کے حصے کے طور پر ہم فیس بک پروٹیکٹ کو بڑھا رہے ہیں۔ یہ ایک ایسا پروگرام ہے جو ان لوگوں کے لیے ڈیزائن کیا گیا ہے جو ممکنہ طور پر بدنیتی پر مبنی ہیکرز، بشمول انسانی حقوق کے محافظ، صحافی اور سرکاری اہلکار کے ذریعے نشانہ بن سکتے ہیں۔ سوشل میڈیا کمپنی نے وضاحت کی کہ جن لوگوں کو فیس بک پروٹیکٹ آن کرنا چاہیے وہ عوامی بحث کے لیے اہم کمیونٹیز کے مرکز میں تھے۔ وہ جمہوری انتخابات کو قابل بناتے ہیں، حکومتوں اور تنظیموں کو جوابدہ بناتے ہیں اور دنیا بھر میں انسانی حقوق کا دفاع کرتے ہیں۔ بدقسمتی سے اس کا مطلب یہ بھی ہے کہ وہ برے اداکاروں کی طرف سے بہت زیادہ نشانہ بنتے ہیں۔

      مزید پڑھیں: EXPLAINED: یوکرین پر جنگ مسلط کرنے کا روسی صدر ولادیمیر پوٹن کے پاس کیا ہے جواز؟

      فعال ہونے پر Facebook لوگوں کے اکاؤنٹس کی حفاظت کرتا ہے جیسے کہ دو عنصر کی تصدیق اور ممکنہ ہیکنگ کے خطرات کی نگرانی کے لیے مضبوط حفاظتی تحفظ کو فعال کر کے۔ تاہم جب فیس بک نے ان صارفین کو ایک ای میل بھیجا جن کے اکاؤنٹس کو خطرہ تھا، تو انہوں نے اسے اسپام سمجھ لیا کیونکہ فیس بک کا ای میل ایڈریس security@facebookmail.com صارفین کو بجائے اسپام والا معلوم ہوا۔ بہت سے لوگوں نے ای میل کو یہ سوچ کر نظر انداز کر دیا کہ یہ ایک اور فشنگ حملہ تھا۔

      پتہ چلا کہ یہ اصل میں اسپام نہیں تھا، فیس بک نے صارفین کو ای میل بھیجی تھی۔ فیس بک پروٹیکٹ کو ایکٹیویٹ کرنے کی آخری تاریخ 17 مارچ تھی لیکن زیادہ تر لوگوں نے ای میل کو نظر انداز کر دیا اور اب وہ اپنے اکاؤنٹ سے لاک آؤٹ ہو چکے ہیں۔ ایک فیس بک صارف، جو اولیویا تھیسن کے نام سے جانا جاتا ہے، نے ٹویٹر پر پوسٹ کیا کہ آج فیس بک سے غیر معینہ مدت کے لیے میرا اکاونٹبند ہو گیا ہوں کیونکہ میں نے فیس بک کے نئے فیس بک پروٹیکٹ سسٹم کے بارے میں ایف بی کی ای میلز کا جواب نہیں دیا (جو کہ ایک گھوٹالے کی طرح لگتا تھا)، جس کو مجھے آج تک فعال کرنے کی ضرورت تھی۔ ابھی تک، متن اور سیکیورٹی کلیدی اختیارات کام نہیں کرتے ہیں۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: