உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پاکستان کیلئے IMF کی طرف سےفنڈز جاری، کیا 1.1 بلین ڈالرسےزائدرقم پاک معیشت کابنےگی سہارا؟

    آئی ایم ایف نے پاکستان کو دیا فنڈس

    آئی ایم ایف نے پاکستان کو دیا فنڈس

    آئی ایم ایف کے ڈپٹی منیجنگ ڈائریکٹر اینٹونیٹ صیح (Antoinette Sayeh) نے کہا کہ ایندھن کے محصولات اور توانائی کے نرخوں میں طے شدہ اضافے پر عمل کرنا ضروری ہے کیونکہ پاکستان کی معیشت حالات سے متاثر ہوئی ہے اور اس کے بہت جلد سدھرنے کے امکانات نہیں ہیں۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • inter, IndiaPakistanPakistanPakistanPakistan
    • Share this:
      بین الاقوامی مالیاتی فنڈ (International Monetary Fund) نے پاکستان کی معاشی امداد کے لیے بیل آؤٹ پروگرام کے ساتویں اور آٹھویں جائزوں کی منظوری دے دی، جس کے تحت سیلاب کی وجہ سے معاشی مندی کے شکار پاکستان کو 1.1 بلین ڈالرس سے زیادہ کے فنڈس دیئے جائیں گے۔ فنڈ کے ذمہ داران اور حکومت پاکستان نے مشترکہ طور پر اس کی تصدیق کی ہے۔ آئی ایم ایف نے مذکورہ پروگرام کو ایک سال تک بڑھانے کا اعادہ بھی کیا ہے۔

      یہ فنڈ تباہ کن سیلاب سے متاثرہ پاکستان کے لیے ’زندگی کا آکسیجن‘ ثابت ہو سکتا ہے۔ ملک کے وزیر منصوبہ بندی کے مطابق سیلاب کی وجہ سے اب تک کم از کم 10 بلین ڈالر کا نقصان ہوا ہے۔ ایک بیان میں آئی ایم ایف کے ڈپٹی منیجنگ ڈائریکٹر اینٹونیٹ صیح (Antoinette Sayeh) نے کہا کہ ایندھن کے محصولات اور توانائی کے نرخوں میں طے شدہ اضافے پر عمل کرنا ضروری ہے کیونکہ پاکستان کی معیشت حالات سے متاثر ہوئی ہے۔ ان میں یوکرین میں جنگ سے ہونے والے نقصانات اور گھریلو چیلنجز شامل ہیں۔

      پاکستان کے زرمبادلہ کے ذخائر اس سطح تک گر چکے ہیں جو صرف ایک ماہ کی برآمدات پر محیط ہے اور اس کی معیشت بڑے پیمانے پر کرنٹ اکاؤنٹ خسارے اور بلند افراط زر سے دوچار ہے۔ وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل کی جانب سے ٹوئٹر کے ذریعے خبر بریک کرنے کے چند گھنٹے بعد فنڈ نے  رقم کی تقسیم کا اعلان کیا۔

      یہ بھی پڑھیں: 

      بلیک آؤٹ فٹ میں Akanksha Puri کی اب تک کی سب سے بولڈ تصویریں، میکا سنگھ نے یوں دیا ردعمل

      اطلاع کے مطابق یہ توسیعی فنڈ سہولت (EFF) پروگرام ابتدائی طور پر 36 ماہ کے لیے جاری کی گئی ہے اور 2019 میں اس کی منظوری کے وقت اس کی مالیت 6 بلین ڈالر تھی۔ یہ اس سال کے شروع سے رک گیا تھا کیونکہ اسلام آباد قرض دہندہ کے مقرر کردہ اہداف کو پورا کرنے میں جدوجہد کر رہا تھا۔

      یہ بھی پڑھیں: 

      Trade with Pakistan: پاکستان کے ساتھ تجارت ممکن نہیں! ’پہلےسرحدپاردہشت گردی کوکیاجائےختم‘



      آئی ایم ایف بورڈ نے پروگرام کے کچھ معیارات پر پورا اترنے میں ملک کی ناکامی سے متعلق چھوٹ کی پاکستان کی درخواست کو بھی منظور کیا ہے۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: