کشمیرموضوع پرشکست کھانےکے بعد پاکستان کو 24 گھنٹےمیں لگےمزید دو بڑے جھٹکے

کشمیرموضوع پرایک بارپھرسے پاکستان کومنہ کی کھانی پڑی ہے۔ ساتھ ہی اب امریکہ نے بڑا فیصلہ لیتے ہوئے پاکستان کو3000 کروڑروپئے دینے سے انکارکردیا ہے۔ 

Aug 17, 2019 08:38 PM IST | Updated on: Aug 17, 2019 08:43 PM IST
کشمیرموضوع پرشکست کھانےکے بعد پاکستان کو 24 گھنٹےمیں لگےمزید دو بڑے جھٹکے

کشمیرموضوع پرشکست کھانےکےبعد پاکستان کو 24 گھنٹےمیں دو مزید بڑے جھٹکے لگے۔

کشمیرموضوع پرایک بارپھرسے پاکستان کومنہ کی کھانی پڑی ہے۔ جموں وکشمیرمیں دفعہ 370 میں تبدیلی کے موضوع کوپاکستان کے کہنے پرچین نے اقوام متحدہ سلامتی کونسل (یواین ایس سی) میں اٹھایا، لیکن چین کوچھوڑکردنیا کے کسی اورملک کی حمایت نہیں ملی۔ وہیں کشمیرموضوع پرپاکستان کی شکست کے بعد اورہندوستان کے ساتھ بڑھتی کشیدگی کے سبب سرمایہ کاروں نے شیئربازارسے پیسہ نکال لیا ہے۔

اس سے وہاں  کے شیئربازارکا اہم انڈیکس کے ایس ای 100700 پوائنٹ نیچے گرگیا اور کروڑوں روپئےکچھ ہی منٹوں میں ڈوب گئے۔ اس کے علاوہ اب امریکہ نے پاکستان کودی جانے والی اقتصادی مدد کوبھی کم کرنےکا اعلان کیا ہے۔

Loading...

کشمیرموضوع پرشکست کھانےکےبعد پاکستان کو 24 گھنٹےمیں دو مزید بڑے جھٹکے لگے۔ تصویر: فائل فوٹو

کشمیرموضوع پرشکست کھانےکےبعد پاکستان کو 24 گھنٹےمیں دو مزید بڑے جھٹکے لگے۔ تصویر: فائل فوٹو

امریکہ نے دیا پاکستان کوجھٹکا

اقتصادی بحران سے گزررہے پاکستان کوامریکہ نے ایک اورجھٹکا دیا ہے۔ امریکہ نے کیری لوگربرمن ایکٹ کے تحت پاکستان کودی جانے والی مجوزہ اقتصادی مدد میں 44 کروڑ ڈالر (تقریباً 3036 کروڑروپئے) کی کٹوتی کردی ہے۔ اس کٹوتی کے بعد پاکستان کو4.1 ارب ڈالرکی رقم دی جائے گی۔

پاکستانی اخبارایکسپریس ٹربیون کی رپورٹ کے مطابق اقتصادی مدد میں کٹوتی کے فیصلے کے بارے میں پاکستان کو عمران خان کے امریکی دورہ سے تین ہفتہ قبل ہی آفیشیل اطلاع دے دی گئی تھی۔ امریکہ سے یہ اقتصادی مدد پاکستان پیپا (پاکستان اینہاس پارٹنرشپ ایگریمنٹ) کے ذریعہ حاصل کرتا ہے۔

پاکستان کے اعدادوشمار بیوروکی طرف سے جاری مہنگائی کے اعدادوشمار کے مطابق بڑھنے سےغریبی ریکھا میں رہنے والوں کی تعداد میں 40 لاکھ کا مزید اضافہ ہوجائےگا۔ پاکستان کے اعدادوشمار بیوروکی طرف سے جاری مہنگائی کے اعدادوشمار کے مطابق بڑھنے سےغریبی ریکھا میں رہنے والوں کی تعداد میں 40 لاکھ کا مزید اضافہ ہوجائےگا۔

ڈوب گئے لاکھوں کروڑوں روپئے

پاکستان کے وزیراعظم عمران خان کے پہلے سال کی مدت 28 اگست کومکمل ہورہی ہے۔ اس دوران پاکستان کی معیشت کھوکھلی ہوگئی ہے۔ گزشتہ ایک سال کے دوران ملک میں مہنگائی 11 فیصدی ہوگئی ہے۔ وہیں ملک کی زرمبادلہ کے ذخائر پوری طرح سے خالی ہوچکی ہے۔ اسی لئے گزشتہ ایک سال کے دوران پاکستان کے شیئربازارکی بازار مارکیٹ ویلیوایک لاکھ کروڑپاکستانی روپئے گرگئی ہے۔ اس دوران کے ایس ای -100 انڈیکس 12,596 پوائنٹ گرگیا ہے۔

Loading...