ہوم » نیوز » عالمی منظر

پاکستان نے بات چیت منسوخ ہونے کی اطلاع اقوام متحدہ کو دی

پاکستان نے ہندوستان کے خلاف سفارتی دباؤ قائم رکھنے کے مقصد سے ہندوستان کے ساتھ قومی سلامتی کے مشیر کی سطح کی بات چیت منسوخ ہونے کی اطلاع اقوام متحدہ کو دی ہے اور اس کے اہلکاروں سے بات کی ہے

  • Share this:
پاکستان نے بات چیت منسوخ ہونے کی اطلاع اقوام متحدہ کو دی
پاکستان نے ہندوستان کے خلاف سفارتی دباؤ قائم رکھنے کے مقصد سے ہندوستان کے ساتھ قومی سلامتی کے مشیر کی سطح کی بات چیت منسوخ ہونے کی اطلاع اقوام متحدہ کو دی ہے اور اس کے اہلکاروں سے بات کی ہے

اسلام آباد : پاکستان نے ہندوستان کے خلاف سفارتی دباؤ قائم رکھنے کے مقصد سے ہندوستان کے ساتھ قومی سلامتی کے مشیر کی سطح کی بات چیت منسوخ ہونے کی اطلاع اقوام متحدہ کو دی ہے اور اس کے اہلکاروں سے بات کی ہے۔

ایک سینئر سفارتکار نے بتایا کہ بات چیت منسوخ ہونے کے فوراً بعد اقوام متحدہ کے لئے پاکستان کی مستقل نمائندہ ملیحہ لودی نے اقوام متحدہ کے نائب سکریٹری جنرل جان فلیپسن سے پیر کے روز ملاقات کی اور بتایا کہ بات چیت سے پہلے ہندوستان نے کچھ پیشگی شرائط رکھ دیں جس کی وجہ سے دہشت گردی اور دیگر معاملوں پر دونوں ملکوں کے مابین قومی سلامتی کے مشیر کی سطح کی بات چیت نہیں ہوسکی۔انہوں نے کہا کہ اس معاملے میں ہندوستان روس کے اوفا میں بات چیت کے لئے ہوئی مفاہمت سے پیچھے ہٹ گیا ہے۔

پاکستان کی نمائندہ کی عالمی ادارے کے اہلکاروں سے ملاقات کے بعد اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل بان کی مون نے منگل کے روز ایک بیان جاری کرکے ہندوستان اور پاکستان کے مابین بات چیت منسوخ ہونے پر اظہار افسوس کیاتھا۔سکریٹری جنرل نے دونوں ملکوں سے اپنے اختلافات دور کرنے کے لئے بات چیت کا دروازہ کھلا رکھنے اور جلد ہی اسے پھر شروع کرنے کی اپیل کی ۔ملیحہ لودی نے اقوام متحدہ کے اہلکاروں سے اپنی بات چیت کے دوران کنٹرول لائن کی خلاف ورزی کا معاملہ بھی اٹھایا اور کہا کہ دونوں ملکوں کے نیم فوجی دستوں کے اہلکار اس بارے میں جلد ہی بات کریں گے۔

دہشت گردی کے خلاف لڑائی میں امریکہ سے مدد طلب

اسلام آباد : پاکستان نےدہشت گردی کے خلاف آخری دم تک لڑائی جاری رکھنے کے اپنے عہد کا ایک بار پھر اعادہ کرتے ہوئے اس لڑائی میں امریکہ سے امداد جاری رکھنے کی اپیل کی ہے۔

امریکہ کے اس اشارے کے بعد پاکستان نے یہ اپیل کی ہے کہ وہ افٖٖغان طالبان کے تمام گروپوں کے خلاف اپنی مہم میں ان میں سے سب سے زیادہ خطر ناک بن جانے والے حقانی گروپ کا صفایا نہیں کرسکا ہے، جس کی وجہ سے اسے دی جانے والی فوجی امداد بند کی جاسکتی ہے۔

پاکستان کے دفاع سکریٹری لفٹینٹ جنرل (ریٹائرڈ) محمد عالم کھٹک نے پاکستان کے دورے پر آئے امریکی جنرل لائڈٖآسٹن سے ملاقات کے بعد امریکہ اور دیگر ملکوں سے دہشت گردی کے خاتمے کی پاکستان کی کوشش کو سمجھنے اور اس لڑائی کے لئے امدا د جاری رکھنے کی اپیل کی۔

امریکی جنرل نے پاکستان کے فوجی سربراہ جنرل راحیل شریف اور پاکستان کے چیف آف جوائنٹ اسٹاف جنرل راشد محمود سے کل پورے دن بات چیت کی۔میٹنگ کے دوران جنرل راحیل شریف اور جنرل آسٹن نے دہشت گردی کے خلاف لڑائی میں پاکستانی فوج کے رول کا اعتراف کیا۔

ذرائع کے مطابق راحیل شریف نے دہشت گردی کے خلاف لڑائی کے لئے امریکہ سےملنے والے فنڈ اور حقانی گروپ کے خلا ف لڑائی میں مبینہ کوتاہی کی وجہ سے اسے بند کرنے کی امریکی واننگ کے سلسلے میں بھی تبادلہ خیال کیا۔خیال رہے کہ امریکہ نے اب تک یہ امداد بند نہیں کی ہے۔

First published: Aug 27, 2015 06:03 PM IST