உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Iran: ایران کے بڑے بندرگاہی شہر میں شدید زلزلہ، 5 افراد ہلاک، 90 سے زائد زخمی

    90 سے زائد زخمی ہوگئے۔

    90 سے زائد زخمی ہوگئے۔

    ایران کی ہلال احمر سوسائٹی نے صبح کہا کہ تلاش اور بچاؤ کی کارروائیاں تقریباً ختم ہو چکی ہیں۔ ہرمزگان کے گورنر دوستی نے سرکاری ٹیلی ویژن کو بتایا کہ "ہم زلزلے کے متاثرین کی رہائش پر توجہ دے رہے ہیں۔"

    • Share this:
      ہفتے کے روز جنوبی ایران میں آنے والے شدید زلزلوں کے جھٹکوں سے کم از کم پانچ افراد ہلاک، 90 سے زیادہ زخمی اور ایک پورا گاؤں ملبے کا ڈھیر بن گیا۔ امریکی جیولوجیکل سروے نے بتایا کہ زلزلہ میں 6.0 کی شدت کے دو جھٹکے شامل ہیں۔ یہ زلزصوبہ ہرمزگان کے بندر عباس کے بڑے بندرگاہی شہر کے مغرب میں آئے۔

      یو ایس جی ایس نے بتایا کہ پہلا جھٹکا دیزگان قصبے کے شمال میں صبح 2 بجے (2130 GMT) کے فوراً بعد ہوا، اس سے پہلے کہ دو گھنٹے بعد 5.7 کی شدت کا زلزلہ آیا اور اس کے بعد تیزی سے 6.0 شدت کا دوسرا زلزلہ آیا۔ ہرمزگان کے گورنر مہدی دوستی نے سرکاری خبر رساں ایجنسی IRNA کے حوالے سے بتایا کہ پانچ افراد ہلاک ہوئے۔ دوستی نے سرکاری ٹیلی ویژن کو بتایا کہ زلزلے کے مرکز کے قریب واقع گاؤں سیہ کھوش مکمل طور پر تباہ ہو چکا ہے۔

      قومی ہنگامی خدمات کے ترجمان مجتبیٰ خالدی نے سرکاری ٹیلی ویژن کو بتایا ’’ ترانوے افراد زخمی ہوئے، جن میں سے صرف سات اب بھی علاج کے لیے اسپتال میں ہیں۔‘‘ نشریاتی ادارے نے صیغ خوش میں رہائشی عمارتوں کی فوٹیج دکھائی، جو اندھیرے میں ڈوبی ہوئی تھیں۔

      ایک اور ویڈیو میں ایک خاندان کو ملبہ چھانتے ہوئے اور اپنا سامان نکالنے کی کوشش کرتے ہوئے دیکھا گیا، جب کہ پس منظر میں ایک خاتون کی چیخیں سنائی دے رہی تھیں۔ ایمبولینسوں اور دیگر گاڑیوں نے ملبے سے ڈھکی سڑکوں پر جانے کی کوشش کی جب حیران شہری سڑکوں پر گھوم رہے تھے۔

      مزید پڑھیں: Cryptoqueen:وہ حسین ڈاکٹر جس نے کرپٹو کے نام پر لگایا32 ہزار کروڑ کا چونا، تلاش کرنے والوں کو ملے گا ایک لاکھ ڈالر


      سرکاری میڈیا نے رپورٹ کیا کہ لوگوں نے صوبائی دارالحکومت بندر عباس میں رات باہر گزاری۔ جس کی آبادی 5,00,000 سے زیادہ ہے، جو زلزلے کے مرکز سے تقریباً 100 کلومیٹر مشرق میں واقع ہے۔ وزیر داخلہ احمد واحدی نے صوبہ ہرمزگان کا دورہ کیا اور سرکاری ٹیلی ویژن کو بتایا کہ پانی اور بجلی کی بحالی حکومت کی اولین ترجیحات میں شامل ہے۔

      یہ بھی پڑھیں: America: روس کے خلاف امریکہ کی بڑی کاروائی! 1 بلین ڈالر سے زائد کمپنی پر پابندی


      ایران کی ہلال احمر سوسائٹی نے صبح کہا کہ تلاش اور بچاؤ کی کارروائیاں تقریباً ختم ہو چکی ہیں۔ ہرمزگان کے گورنر دوستی نے سرکاری ٹیلی ویژن کو بتایا کہ "ہم زلزلے کے متاثرین کی رہائش پر توجہ دے رہے ہیں۔"
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: