ہوم » نیوز » عالمی منظر

 افغانستان میں غیر ملکی مداخلت کی مخالفت کرے گا ایران

ہندستان میں ایران کے سفیر علی چگینی نے کہا کہ ہمارا پورا خطہ انتہائی نازک حالت میں ہے ، یہ صورتحال ہندوستان اور ایران دونوں کے لیے اہم ہے ، ہم محتاط اور فکر مند ہیں، ہم چاہتے ہیں کہ افغانستان کے لوگ اپنے ملک کا فیصلہ خود کریں ، ہم اس بات کی حق میں ہیں کہ افغانستان کے لوگوں کو اپنے مسائل خود حل کرنے ہوں گے ۔

  • Share this:
 افغانستان میں غیر ملکی مداخلت کی مخالفت کرے گا ایران
ہندستان میں ایران کے سفیر علی چگینی

نئی دہلی : امریکی صدر جوبائڈن کے ذریعہ افغانستان اور عراق سے امریکی فوجیوں کی واپسی کے فیصلہ کے بعد افغانستان میں طالبان اور افعان فوج کے درمیان تشدد اور جنگ کا دور جاری ہے ۔ ایسے میں ہندستان میں ایران کے سفیر علی چگینی نے دہلی میں ایران کلچر ہاؤس میں ایک کتاب کے رسم اجرا کی تقریب کے موقع پر نیوز 18 سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ جو کچھ اس پورے خطہ میں ہورہا ہے ، اس کو لے کر ایران اور پڑوسی ممالک فکرمند ہیں ، جن میں ہندستان بھی شامل ہے ۔  علی چگینی نے کہا کہ ہماری خواہش ہے کہ ہم افغانستان کے لوگوں کی مدد کریں ۔ تاکہ وہ اپنا ملک خود سنبھال سکیں ۔ ساتھ ہی اندرون افغانستان خانہ جنگی کی صورتحال سے بھی بچا جاسکے ۔


علی چگینی نے کہا کہ ہمارا پورا خطہ انتہائی نازک حالت میں ہے ، یہ صورتحال ہندوستان اور ایران دونوں کے لیے اہم ہے ، ہم محتاط اور فکر مند ہیں، ہم چاہتے ہیں کہ افغانستان کے لوگ اپنے ملک کا فیصلہ خود کریں ، ہم اس بات کی حق میں ہیں کہ افغانستان کے لوگوں کو اپنے مسائل خود حل کرنے ہوں گے ۔ پڑوسی ممالک افغانستان کی ترقی اور امن میں مدد کر سکتے ہیں ۔ لیکن کسی بھی غیر ملکی ہاتھ بیرون ملکی مداخلت سے افغانستان کے مسائل کا حل نہیں نکل پائے گا ۔


اس سے قبل علی چگینی نے نیوز 18 سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ایران کے نئے صدر ہندوستان سے بہت زیادہ مانوس ہیں ، وہ دو مرتبہ ہندستان کا دورہ کر چکے ہیں ، ان کی اہلیہ جو ایک اسکالر ہیں وہ بھی ہندوستان آ چکی ہیں ، ہمیں امید ہے کہ ہندوستان کے ساتھ تعلقات بہتر ہوں گے ۔


غورطلب ہے کہ حال ہی میں ترکی نے افغانستان میں قندھار ہوائی اڈہ کی حفاظت کی پیش کش کی تھی جبکہ امریکی فوجی افغانستان سے لوٹ چکے ہیں ۔ تاہم امریکہ مسلسل افغان فوج کی ٹریننگ کیلئے پرعزم رہنے کی بات کررہا ہے ۔ حالانکہ ایران کا موقف امریکی فوجوں کی مشرق وسطی اور سینٹرل ایشیا میں موجودگی کے خلاف رہا ہے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Aug 03, 2021 11:11 PM IST