عراق نے سلامتی دستوں کے قتل کے لئے قصوروار ٹھہرائے گئے 42 انتہا پسندوں کو پھانسی دی

بغداد۔ عراق نے سلامتی دستوں کے قتل کے لئے قصوروار ٹھہرائے گئے 42 انتہا پسندوں کو پھانسی دے دی ہے۔

Sep 26, 2017 09:14 AM IST | Updated on: Sep 26, 2017 09:14 AM IST
عراق نے سلامتی دستوں کے قتل کے لئے قصوروار ٹھہرائے گئے 42 انتہا پسندوں کو پھانسی دی

علامتی تصویر

بغداد۔ عراق نے سلامتی دستوں کے قتل کے لئے قصوروار ٹھہرائے گئے 42 انتہا پسندوں کو پھانسی دے دی ہے۔ وزارت قانون نے کہا کہ کل نصیریہ کے جیل میں 42 انتہا پسندوں کو پھانسی دی گئی۔ اس سے تین ماہ قبل بھی 14 انتہا پسندوں کو قصوروار ٹھہرائے جانے کے بعد پھانسی دی گئی تھی۔

وزارت نے کہا کہ اس سال 14 ستمبر کو نصیریہ میں ریستوراں اور جانچ چوکی کو نشانہ بناکر تین خودکش حملے کئے گئے تھے جس میں 60 افراد مارے گئے تھے۔ انہوں نے کہا کہ مارے گئے لوگوں کے لواحقین نے قصورواروں کے خلاف سخت کارروائی کا مطالبہ کیا تھا۔ اس حملہ کی ذمہ داری اسلامک اسٹیٹ (آئی ایس) نے قبول کی تھی۔

Loading...

Loading...