مارا گیا آئی ایس کا دوسرا بڑا شدت پسند- وائٹ ہاؤس

شدت پسندتنظیم دولت اسلامیہ (آئی ایس) کا نائب لیڈر فضیل احمد الحیالی امریکہ کے فضائی حملے میں عراق کے موسل کے قریب مارا گیا۔

Aug 22, 2015 10:24 AM IST | Updated on: Aug 22, 2015 10:24 AM IST
مارا گیا آئی ایس کا دوسرا بڑا شدت پسند- وائٹ ہاؤس

واشنگٹن۔ شدت پسندتنظیم دولت اسلامیہ (آئی ایس) کا نائب لیڈر فضیل احمد الحیالی امریکہ کے فضائی حملے میں عراق کے موسل کے قریب مارا گیا۔ وائٹ ہاؤس نے بھی اس خبر کی تصدیق کی ہے۔

وائٹ ہاؤس کے ترجمان نیڈ پرائس نے کہا کہ فضیل احمدالحیالی 18 اگست کو عراق کے موسل کے قریب ایک گاڑی میں سفر کرتے وقت امریکی فضائی حملے میں مارا گیا۔ مسٹر پرائس نے کہا کہ الحیالی کی موت سے آئی ایس کو بھاری نقصان پہنچے گا کیونکہ دولت اسلامیہ میں اس کے پاس خزانہ، میڈیا، آپریشن اور رسد جیسے محکموں کی ذمہ داری ہے۔ وائٹ ہاؤس کے مطابق الحیالی عراق اور شام کے درمیان ہتھیار، دھماکہ خیز مواد، گاڑیوں، اور لوگوں کو لے جانے کا کوآرڈینیٹر تھا۔ وہ عراق میں آئی ایس کے آپریشن کا انچارج تھا اور گزشتہ سال جون میں موصل نے اس نے آئی ایس کی جارحانہ پالیسی بنانے میں مدد کی۔ امریکہ کی قیادت میں اتحادی فوج عراق اور شام میں آئی ایس کے ٹھکانوں کو نشانہ بنا کر فضائی حملے کر رہی ہے۔ ایسے ہی ایک ڈرون حملے میں گزشتہ ماہ شام میں آئی ایس کے گڑھ رقہ صوبے میں آئی ایس کے ایک سینئر شدت پسند ہلاک ہوگیا تھا۔

Loading...

Loading...