آئی ایس نے ایک ماہر آثار قدیمہ کا سر قلم کیا

اسلامک اسٹیٹ نے شام کے قدیم شہر پلمايرا میں ایک ماہر آثار قدیمہ کا سر قلم کر دیا اور اس کی لاش کو شہر کے ایک تاریخی مقام کے اوپر لٹکا دیا ہے۔

Aug 19, 2015 10:20 AM IST | Updated on: Aug 19, 2015 10:21 AM IST
آئی ایس نے ایک ماہر آثار قدیمہ کا سر قلم کیا

دمشق۔ اسلامک اسٹیٹ نے شام کے قدیم شہر پلمايرا میں ایک ماہر آثار قدیمہ کا سر قلم کر دیا اور اس کی لاش کو شہر کے ایک تاریخی مقام کے اوپر لٹکا دیا ہے۔

شام کے نوادرات کے سربراہ مامون عبد الکریم نے بتایا کہ ماہر آثار قدیمہ خالد اسد (82) کے خاندان کے ارکان نے آج مطلع کیا کہ آئی ایس نے مسٹر اسد کو قتل کر دیا۔ انہوں نے بتایا کہ جنگوؤں نے مسٹر اسد کو ایک ماہ سے زائد وقت سے یرغمال بنا رکھا تھا۔ مسٹر عبدالکریم نے کہا کہ ذرا تصور کیجئے کہ جس عالم نے یہاں کی تاریخ کے لئے اتنی یادگار خدمات کی ہو اسے موت کی سزا دی جائے گی اور اس کے جسم کو پلمايرا کے ایک قدیم مقام میں لٹکایا جائے گا '۔

Loading...

انہوں نے بتایا کہ مسٹر اسد کے مضامین بین الاقوامی میگزین میں شائع ہوئے ہیں۔ انہوں نے کئی سال تک امریکہ، فرانس، جرمنی اور سوئٹزرلینڈ کے آثار قدیمہ مشن کے ساتھ بھی کام کیا ہے۔

Loading...