ہوم » نیوز » عالمی منظر

اسرائیل عراق میں کر سکتا ہے ایرانی اہداف پر حملہ

یہ پوچھے جانے پر کہ کیا عراق میں ممکنہ کارروائی شامل ہے، لیبرمین نے کہا، "میں کہہ رہا ہوں کہ ہم کسی بھی ایرانی خطرے کا سامنا کریں گے

  • UNI
  • Last Updated: Sep 04, 2018 11:02 AM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
اسرائیل عراق میں کر سکتا ہے ایرانی اہداف پر حملہ
فوٹو: یو این آئی

 اسرائیل نے عندیہ دیا ہے کہ وہ عراق میں واقع مشتبہ ایرانی فوجی اہداف پر حملہ کر سکتا ہے جیسا کہ اس نے جنگ سے متاثر شام میں بہت سے فضائی حملے کئے ہیں۔ اسرائیل کے وزیر دفاع ایوگڈور لیبرمین نے اسرائیلی ٹیلی ویژن کے لائیو نشر یہ میں ایک کانفرنس میں کہا’’ہم یقینی طور پر شام میں ہونے والی ہر چیز کی اور ایرانی خطرات کے سلسلے میں نگرانی کر رہے ہیں۔ ہم صرف شامی علاقے تک محدود نہیں ہیں۔ یہ بھی واضح ہوجانا چاہئے‘‘۔


یہ پوچھے جانے پر کہ کیا عراق میں ممکنہ کارروائی شامل ہے، لیبرمین نے کہا، "میں کہہ رہا ہوں کہ ہم کسی بھی ایرانی خطرے کا سامنا کریں گے اور اس سے کوئی فرق نہیں پڑتا کہ یہ کہاں سے آتا ہے۔ اسرائیل کو مکمل آزادی ہے۔ ہم اس کارروائی کی آزادی کو برقرار رکھتے ہیں‘‘۔


ایرانی، عراقی اور مغربی ذرائع کا حوالہ دیتے ہوئے، رائٹر نے گزشتہ ہفتے ایک رپورٹ دی تھی کہ ایران نے حالیہ مہینوں میں عراق میں اپنے شیعہ ساتھیوں کو کم فاصلے والی بیلسٹک میزائل سونپا تھا۔ ایران اور عراق نے باضابطہ طور پر اس رپورٹ کو مسترد کر دیا تھا۔اسرائیل ایران کی علاقائی توسیع پسندی کو اپنے خلاف نئے مورچہ کھولنے کی کوشش کے طور پر دیکھتا ہے۔ اسرائیل نے شامی جنگ میں مدد کرنے والی ایرانی فورسز کی کسی بھی مداخلت کو روکنے کے لئے بار بار شام میں حملے کئے ہیں۔


First published: Sep 04, 2018 11:02 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading