ہوم » نیوز » عالمی منظر

دو سال میں مرد سے 'کنواری' عورت بنا شخص ، اب ساڑھے سات کروڑ کے جسم کیلئے ڈھونڈ رہی پارٹنر

37 سال کی جیسیکا (Jessica Alves) نے دو سال پہلے مرد سے عورت بننے کا فیصلہ کیا تھا ۔ اس کے بعد اس نے اپنے جسم کی سرجری پر پانی کی طرح پیسہ بہادیا ۔ جیسکا نے اب انکشاف کیا ہے کہ وہ اپنے لئے پرفیکٹ پارٹنر تلاش کررہی ہے ۔

  • Share this:
دو سال میں مرد سے 'کنواری' عورت بنا شخص ، اب ساڑھے سات کروڑ کے جسم کیلئے ڈھونڈ رہی پارٹنر
دو سال میں مرد سے 'کنواری' عورت بنا شخص ، اب ساڑھے سات کروڑ کے جسم کیلئے ڈھونڈ رہی پارٹنر

دنیا میں کئی لوگ ہوتے ہیں ، جنہیں خدا کے ذریعہ جیسا بنایا جاتا ہے ، اس سے مطمئن نہیں ہوتے ہیں ۔ ایسی ہی ایک شخصیت ریئلٹی ٹی وی اسٹار جیسیکا الویس ہے ۔ جیسیکا کو ہیومن کین ڈال بھی کہا جاتا تھا ۔ لیکن اپنی اس جنس سے وہ خوش نہیں تھی ، جس کی وجہ سے دو سالوں میں اس نے تقریبا 78 لاکھ روپے خرچ کرکے لڑکی کا جسم پایا ۔ اب خود کو پوری طرح لڑکی بنانے کیلئے اس کو ایک پارٹنر کی تلاش ہے ۔ جیسیکا نے کہا کہ وہ اپنے خوابوں کے راجکمار کو ہی سب سے پہلے خود کو ہاتھ لگانے دے گی ، تب تک وہ کنواری ہی رہے گی ۔


37 سال کی جیسیکا نے دو سال پہلے مرد سے عورت بننے کا فیصلہ کیا تھا ۔ اس کے بعد اس نے اپنے جسم کی سرجری پر پانی کی طرح پیسہ بہادیا ۔ بوبس جاب کے علاوہ اس نے بم ہیپس امپلانٹس کروائے ۔ ساتھ ہی اپنے سر کے شیپ کی بھی سرجری کروائی ۔ اس کے بعد بھی جب اس کو ادھورا پن لگا تو اس نے اپنے پرائیویٹ پارٹس بھی عورت کے طرح بنوالئے ۔


جیسیکا کی شناخت کچھ وقت پہلے ہیومن کین ڈال کے طور پر تھی ۔ وہ کئی ریئلٹی شوز میں نظر آچکی ہیں ۔ اس وقت وہ مرد تھی ۔ ڈال کے جیسے نظر آنے کیلئے اس نے تب بھی کئی سرجرائی کروائی تھی ۔ 17 سال کی عمر سے شروع ہوئے سرجری کے کھیل میں اب تک جیسیکا نے کچھ ساڑھے سات کروڑ روپے خرچ کردئے ہیں ۔ اس برازیلین اسٹار کو پلاسٹک سرجری کی لت لگ چکی ہے ۔


جیسکا نے اب انکشاف کیا ہے کہ وہ اپنے لئے پرفیکٹ پارٹنر تلاش کررہی ہے ۔ حالانکہ اس کو سوشل میڈیا پر کئی لوگوں نے سیکس کیلئے آفر کیا اور اس کیلئے وہ جیسیکا کو اچھی خاصی رقم بھی دینے کیلئے تیار ہیں ، لیکن جیسیکا یوں ہی کسی کے ساتھ اپنی ورجینیٹی ختم کرنا نہیں چاہتی ۔ اس نے بتایا کہ وہ اپنے پرفیکٹ پارٹنر کا انتظار کرے گی ۔ اگر اس کو کوئی ڈھنگ کا لڑکا نہیں ملا تو وہ کنواری رہنا پسند کرے گی ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: May 19, 2021 11:24 PM IST