உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    قبرستان میں لاشوں کے ساتھ چور نے کیا سیکس ، ملی 6 سال کی سزا

    علامتی تصویر

    علامتی تصویر

    برطانیہ میں ایک چور قبرستان میں دفن لاشوں کے ساتھ جنسی تعلقات بناتا تھا ، جس کیلئے اس کو چھ سال کی سزا سنائی گئی ہے ۔ برمنگھم کی ایک رپورٹ میں چور کو سزا سناتے وقت جج نے کہا کہ یہ جرم انسانیت کے خلاف ہے ۔

    • Share this:
      برطانیہ میں ایک چور قبرستان میں دفن لاشوں کے ساتھ جنسی تعلقات بناتا تھا ، جس کیلئے اس کو چھ سال کی سزا سنائی گئی ہے ۔ برمنگھم کی ایک رپورٹ میں چور کو سزا سناتے وقت جج نے کہا کہ یہ جرم انسانیت کے خلاف ہے ۔
      دراصل یہ معاملہ گزشتہ سال 11 نومبر کا ہے ۔ 23 سال کا ملزم قاسم اسٹان ہاسٹل میں رہتا تھا ، جہاں سے قبرستان کافی نزدیک تھا ۔ یہ واقعہ گریٹ بار میں واقع سینٹرل انگلینڈ کو آپریٹیو میں پیش آیا تھا ۔
      اطلاعات کے مطابق ملزم نے جس  کی لاش کے ساتھ جنسی تعلقات قائم کیا تھا ، اس کے اہل خانہ نے واقعہ کی معلومات دی تھی ، جس کے بعد ڈی این اے ٹیسٹ کی بنیاد پر ملزم کا پتہ چلا اور جمعہ کو چھ سال کی سزا سنائی گئی ۔
      فیصلہ سناتے وقت جج نے ملزم سے کہا کہ تم نے ایسا کیوں کیا ، کیا کیا اس کا جواب صرف تمہارے پاس ہے ، لیکن ایسا جرم انسانیت کے خلاف ہے ۔ جج نے کہا کہ ملزم نے تین لاشوں کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کی تھی اور کافن میں رکھے نو لاشوں کے ساتھ یہ سب کچھ کرنے کی تیاری کررہا تھا ۔
      First published: