کینیا پولیس نے پرمظاہرین پر آنسو گیس کے گولے چھوڑے

نیروبی۔ کینیا کی پولیس نے ملک میں اپوزیشن پارٹیوں کے مضبوط گڑھ كسم شہر سمیت دیگر جگہوں پر سیاسی مظاہرین کو کنٹرول کرنے کے لئے آنسو گیس کے گولے چھوڑے۔

Aug 12, 2017 02:07 PM IST | Updated on: Aug 12, 2017 02:44 PM IST
کینیا پولیس نے پرمظاہرین پر آنسو گیس کے گولے چھوڑے

کینیا پولیس مظاہرین کو منتشر کرنے کی کوشش کرتی ہوئی: تصویر، رائٹرز۔

نیروبی۔  کینیا کی پولیس نے ملک میں اپوزیشن پارٹیوں کے مضبوط گڑھ كسم شہر سمیت دیگر جگہوں پر سیاسی مظاہرین کو کنٹرول کرنے کے لئے آنسو گیس کے گولے چھوڑے۔

ذرائع کے مطابق الیکشن کمیشن کی جانب سے صدارتی انتخابات میں سبکدوش ہونے والے صدر اهرو كینياتا کی جیت کے اعلان کے کچھ دیر بعد ہی مظاہرین كسم اور میتھیرے میں سڑکوں پر آ گئے اور مظاہرہ کرنے لگے۔ پولیس نے مظاہرین کو آگے بڑھنے سے روکنے کی کوشش کی لیکن وہ آگے بڑھتے رہے۔ جس کے بعد پولیس نے مظاہرین پر آنسو گیس کے گولے چھوڑے۔

قابل ذکر ہے کہ کینیا کے سبکدوش ہونے والے صدر اهرو كینياتا نے اپوزیشن پارٹیوں کے زبردست احتجاج اور انتخاب میں جانبداری کے سلسلے میں اٹھنے والے سوالوں کے درمیان دوسری بار صدر کے عہدے کا الیکشن جیت لیا ہے۔ کینیا الیکشن کمیشن کے سربراہ ویفلا چیبوكاٹي نے آج بتایا کہ كینياتا کو کل 54.27 فیصد ووٹ ملے ہیں جبکہ اپوزیشن پارٹی کے رہنما ریلا اوڈنگا صرف 44.17 فیصد ووٹ حاصل کر پائے۔

قابل ذکر ہے کہ کینیا میں صدارتی انتخابات کے بعد اپوزیشن کی جانب سے دھاندلی کے الزامات عائد کیے جا رہے ہیں اور اس دوران پرتشدد مظاہروں میں اب تک 5 افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

Loading...

Loading...