உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    فرانس : پیرس میں نائٹ پارٹی کررہے لوگوں پر چاقو سے حملہ ، ایک کی موت ، داعش نے لی ذمہ داری

    فرانس کی راجدھانی پیرس میں چاقووں سے حملہ کی خبر ہے۔ ہفتہ کی دیر رات ایک شخص نے کچھ لوگوں پر چاقو وں سے حملہ کردیا ، جس میں ایک شخص کی موت اور پانچ افراد زخمی ہو گئے ہیں۔

    فرانس کی راجدھانی پیرس میں چاقووں سے حملہ کی خبر ہے۔ ہفتہ کی دیر رات ایک شخص نے کچھ لوگوں پر چاقو وں سے حملہ کردیا ، جس میں ایک شخص کی موت اور پانچ افراد زخمی ہو گئے ہیں۔

    فرانس کی راجدھانی پیرس میں چاقووں سے حملہ کی خبر ہے۔ ہفتہ کی دیر رات ایک شخص نے کچھ لوگوں پر چاقو وں سے حملہ کردیا ، جس میں ایک شخص کی موت اور پانچ افراد زخمی ہو گئے ہیں۔

    • Share this:
      پیرس : فرانس کی راجدھانی پیرس میں چاقووں سے حملہ کی خبر ہے۔ ہفتہ کی دیر رات ایک شخص نے کچھ لوگوں پر چاقو وں سے حملہ کردیا ، جس میں ایک شخص کی موت اور پانچ افراد زخمی ہو گئے ہیں۔حکام کے مطابق کہ حملہ آور کو پولیس اہلکاروں نے فائرنگ کر کے ہلاک کر دیا ہے جبکہ اس کی شناخت تاحال ظاہر نہیں کی گئی ہے۔دہشت گرد تنظیم داعش نے حملہ کی ذمہ داری لیتے ہوئے کہا ہے کہ ان کے ایک دہشت گرد نے یہ حملہ کیا ہے۔
      یہ واقعہ پیرس کے اوپرا ضلع میں پیش آیا اور حکام کا کہنا ہے کہ زخمی ہونے والے پانچ افراد میں سے دو کی حالت تشویشناک ہے۔ ابھی تک حملے کے محرکات کے بارے میں معلوم نہیں ہو سکا۔بتایا جاتا ہے کہ جس جگہ یہ حملہ کیا گیا ہے وہ نائٹ لائف کیلئے مشہور ہے ۔ یہاں پر ریستوران ، پب اور بار دیر رات تک کھلے رہتے ہیں اور رات بھر یہاں پر چہل پہل رہتی ہے۔
      میڈیا رپورٹس کے مطابق عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ انھوں نے حملہ آور کو 'اللہ اکبر کا نعرہ لگاتے سنا تھا۔عینی شاہدین کے مطابق حملے کے وقت کے افراتفری پھیل گئی اور گلیوں سے لوگ ریستورانوں میں پناہ لینے کے لیے گھس گئے۔ میڈیا رپورٹس میں عینی شاہدین کے حوالے سے بتایا گیا ہے کہ پولیس نے پہلے ٹیزر گن کے ذریعے حملہ آور کو پکڑنے کی کوشش کی لیکن اس میں ناکامی پر دو گولیاں مار کر اسے ہلاک کر دیا۔
      First published: