کالعدم شدت پسند تنظیم لشکرِ جھنگوی کا بانی و سابق امیر ملک اسحاق سمیت 14 شدت پسند ہلاک

نئی دہلی۔ دہشت گرد تنظیم لشکر جھنگوی کا سرغنہ ملک اسحاق ایک تصادم میں مارا گیا ہے۔ ملک اسحاق امریکہ کی عالمی دہشت گرد فہرست میں شامل تھا۔

Jul 29, 2015 03:06 PM IST | Updated on: Jul 29, 2015 03:09 PM IST
کالعدم شدت پسند تنظیم لشکرِ جھنگوی کا بانی و سابق امیر ملک اسحاق سمیت 14 شدت پسند ہلاک

نئی دہلی۔ دہشت گرد تنظیم لشکر جھنگوی کا سرغنہ ملک اسحاق ایک تصادم میں مارا گیا ہے۔ ملک اسحاق امریکہ کی عالمی دہشت گرد فہرست میں شامل تھا۔

معلومات کے مطابق، ملک اسحاق سمیت 14 مشتبہ دہشت گردوں کو بدھ کو  پاکستان کے صوبہ پنجاب کے ضلع مظفرگڑھ میں پولیس انکاؤنٹر میں مار گرایا گیا۔ تصادم میں ملک اسحاق کے دو بیٹے بھی مارے گئے۔

Loading...

خیال رہے کہ ملک اسحاق پر شیعہ اور دیگر مسالک سے تعلق رکھنے والے افراد کے قتل کے درجنوں مقدمات قائم کیے گئے تھے اور وہ تقریباً 15 سال جیل میں رہا۔

وہ ابتدا میں کالعدم تنظیم سپاہ صحابہ کا ممبر تھا لیکن اپنی مبینہ پرتشدد پالیسی کی بنیاد پر سپاہ صحابہ سے اختلاف کے بعد ایک نئی تنظیم لشکر جھنگوی کی بنیاد رکھی اور اس کا بانی امیر بنا۔ یہ تنظیم بھی کالعدم قرار دے دی گئی تھی۔

سنہ 2012 میں سپاہ صحابہ میں قیادت کے معاملے پر اختلافات ختم ہوگئے تھے اور تنظیم کے موجودہ سربراہ احمد لدھیانوی اور ملک اسحاق میں صلح کے بعد اسے تنظیم کا نائب صدر بنا دیا گیا تھا۔

امریکہ کے محکمۂ خارجہ نے اسے ایک ’عالمی دہشتگرد‘ قرار دیا تھا اور اس کی تنظیم لشکرِ جھنگوی کو غیر ملکی دہشت گرد تنظیموں کی فہرست میں شامل کیا تھا۔

Loading...