உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Bilquis Edhi Passes Away: پاکستان کی معروف سماجی و فلاحی کارکن بلقیس ایدھی کا انتقال

    Social Activist Bilquis Edhi Passes Away:: پاکستانی ذرائع کے مطابق بلقیس ایدھی دل کی بیماری suffering from heart disease سمیت دیگر امراض میں مبتلا تھیں اور وہ ایک ماہ سے بیمار تھیں۔

    Social Activist Bilquis Edhi Passes Away:: پاکستانی ذرائع کے مطابق بلقیس ایدھی دل کی بیماری suffering from heart disease سمیت دیگر امراض میں مبتلا تھیں اور وہ ایک ماہ سے بیمار تھیں۔

    Social Activist Bilquis Edhi Passes Away:: پاکستانی ذرائع کے مطابق بلقیس ایدھی دل کی بیماری suffering from heart disease سمیت دیگر امراض میں مبتلا تھیں اور وہ ایک ماہ سے بیمار تھیں۔

    • Share this:
      Social Activist Bilquis Edhi Passes Away: پاکستان سے بڑی خبر سامنے آرہی ہے۔ مرحوم عبدالستار ایدھی کی اہلیہ اور پاکستان کی معروف سماجی و فلاحی کارکن بلقیس ایدھی کا جمعہ کو کراچی کے ایک نجی اسپتال میں انتقال ہوگیا۔ پاکستانی ذرائع کے مطابق بلقیس ایدھی دل کی بیماری suffering from heart disease سمیت دیگر امراض میں مبتلا تھیں اور وہ ایک ماہ سے بیمار تھیں۔ بتایا جاتا ہے کہ ان کا نجی اسپتال میں علاج بھی چل رہا تھا۔ بلقیس ایدھی ترجمان کے مطابق بلقیس ایدھی کی نمازجنازہ اور تدفین کا اعلان بعد میں کیا جائے گا۔

      بلقیس ایدھی Bilquis Edhi نے ایدھی فاؤنڈیشن چلانے میں اپنے شوہر کا شانہ بشانہ ساتھ دیا اور عبدالستار ایدھی کی موت کے بعد بھی اپنے فلاحی کاموں میں مصروف رہیں۔ ایدھی کہا کرتے تھے کہ ان کی بیوی کی مدد اور خدمت کے بغیر ان کے لیے ایدھی فاؤنڈیشن چلانا ناممکن تھا۔

      یہ تصویر مرحوم عبدالستار ایدھی کے wikipedia سے لی گئی ہے۔


      یہ بھی پڑھئے: پاکستانی خاتون کرکٹر Fatima Sana نے کیا عمرہ، سعودی عرب کے مکہ مکرمہ سے تصویر کی شیئر

      بلقیس ایدھی کی پیدائش 1947 میں کراچی میں ہوئی تھی۔ بلقیس ایدھی ایک پروفیشنل نرس تھیں جنھیں ’پاکستان کی ماں‘ بھی کہا جاتا تھا۔ وہ بلقیس ایدھی فاؤنڈیشن (Bilquis Edhi Foundation) کی سربراہ تھیں اور ا پورے پاکستان میں ان کی فلاحی تنظیم خدمات انجام دیتی ہے، جس میں کراچی میں ایمرجنسی سروس اور ایک اسپتال بھی شامل ہے۔ ایدھی فاؤنڈیشن کی ویب سائٹ کے مطابق انھوں نے اور ان کے مرحوم شوہر عبدالستار ایدھی نے اب تک 16 ہزار لاوارث بچے گود لیے تھے۔


      مولانا ایدھی 1928ء میں بھارتی ریاست گجرات کے شہر بناتوا میں پیدا ہوئے تھے۔ ان کے والد کپڑے کے تاجر تھے۔ وہ پیدائشی لیڈر تھے اور شروع ہی سے اپنے دوستوں کو چھوٹے چھوٹے کاموں اور پلے شوز کی ترغیب دیتے تھے۔ جب ان کی ماں انہیں اسکول جاتے ہوئے دو پیسے دیتی تھیں تو وہ ان میں سے ایک پیسہ خرچ کر کے کسی دوسرے ضرورت مند کو دے دیتی تھے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: