உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Pakistan Terrorist Attack: پاکستان کے بلوچستان صوبے میں بڑا دہشت گردانہ حملہ، 10 فوجیوں کی موت، ایک دہشت گرد ہلاک

    ۔فائل فوٹو۔

    ۔فائل فوٹو۔

    افغانستان کے اقتدار پر قابض طالبان پاکستان کے لیے برا ثابت ہو رہے ہیں۔ پاکستان انسٹی ٹیوٹ فار کانفلیکٹ اینڈ سیکیورٹی اسٹڈی (PICSS) کی ایک رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ 10 نومبر سے 10 دسمبر تک ایک ماہ کی جنگ بندی کے باوجود دہشت گرد حملوں کی تعداد میں کمی نہیں آئی ہے۔

    • Share this:
      بلوچستان:پاکستان (Pakistan) کے بلوچستان صوبے (Balochistan) میں بڑا دہشت گردانہ حملہ (Terrorist Attack) ہو اہے۔ اس دہشت گردانہحملے میں 10 فوجیوں کے مارے جانے کی خبر ملی ہے۔ انٹر سروسز پبلک ریلیشنس (ISPR) کے ڈائریکٹر جنرل میجرل جنرل بابر افتخار نے بتایا کہ جمعرات کو بلوچستان کے کیچ ضلع میں ایک سیکورٹی انوسٹی گیشن چوکی پر دہشت گردوں کی جانب سے فائرنگ کی گئی۔ اس حملے میں 10 جوان مارے گئے ہیں۔ فوج کے میڈیا ونگ نے ایک بیان میں کہا ہے کہ یہ واقعہ 25 سے 26 جنوری کی رات کی ہے، جس میں ایک دہشت گرد مارا گیا اور کئی دیگر زخمی ہوگئے۔

      ’ڈان' ویب سائٹ کی خبر کے مطابق، سیکیورٹی فورسز نے اس حملے میں ملوث تین دہشت گردوں کو پکڑ لیا ہے، جب کہ وہ اس واقعے میں ملوث دیگر دہشت گردوں کی تلاش میں ہیں۔ بیان میں کہا گیا کہ مسلح افواج ہماری سرزمین سے دہشت گردوں کو ختم کرنے کے لیے پرعزم ہیں، خواہ کوئی بھی قیمت ادا کی جائے۔ افغانستان کے اقتدار پر قابض طالبان پاکستان کے لیے برا ثابت ہو رہے ہیں۔ پاکستان انسٹی ٹیوٹ فار کانفلیکٹ اینڈ سیکیورٹی اسٹڈی (PICSS) کی ایک رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ 10 نومبر سے 10 دسمبر تک ایک ماہ کی جنگ بندی کے باوجود دہشت گرد حملوں کی تعداد میں کمی نہیں آئی ہے۔ پاکستان میں ہر ماہ دہشت گردانہ حملوں کی اوسط تعداد 2020 میں 16 سے بڑھ کر 2021 میں 25 ہو گئی ہے، جو 2017 کے بعد سب سے زیادہ ہے۔

      103 حملوں میں 170 لوگوں کی موت
      اعداد و شمار سے پتہ چلتا ہے کہ بلوچستان پاکستان کا سب سے زیادہ بدامنی کا شکار صوبہ ہے۔ جہاں 103 حملوں کی وجہ سے 170 افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔ رپورٹ کے مطابق بلوچستان میں زخمیوں کی سب سے زیادہ تعداد بھی ریکارڈ کی گئی ہے، حملوں میں زخمی ہونے والے 50 فیصد سے زائد اسی صوبے میں حملوں کا نشانہ بنے ہیں۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ بلوچستان کے بعد خیبرپختونخوا دوسرا سب سے زیادہ متاثرہ علاقہ ہے۔ ماہرین افغانستان میں پاکستان کی مداخلت پر تشویش کا اظہار کر رہے ہیں۔ ان کا ماننا ہے کہ پاکستان کھلے عام طالبان کی حمایت کر رہا ہے جس سے صرف علاقائی تنازعات بڑھیں گے۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: