ہوم » نیوز » عالمی منظر

مریم نوازنے جیل میں بہترسہولیات لینے سے انکار کیا، نواز شریف کو مزید سہولیات کی امیدیں

پاکستان کے معزول وزیراعظم نواز شریف کی بیٹی مریم نواز نے جیل میں بہتر سہولیات لینے سے انکار کردیا ہے۔

  • Share this:
مریم نوازنے جیل میں بہترسہولیات لینے سے انکار کیا، نواز شریف کو مزید سہولیات کی امیدیں
نواز شریف اور مریم نواز: فائل فوٹو

بدعنوانی کے معاملےمیں 7 سال کی سزا پاچکی سابق وزیراعظم نوازشریف کی بیٹی مریم نوازنے اڈیالہ جیل میں بہترسہولیات لینے سےانکار کردیا ہے۔ مریم کی طرف سے جاری بیان میں کہا گیا ’’جیل انچارج نے ضابطوں کے مطابق مجھے بہتر کلاس اور سہولیات کے لئے درخواست دینے کو کہا تھا، جسے میں نے ٹھکرا دیا‘‘۔


مریم نے اس بیان میں بتایا کہ یہ پوری طرح میرا خود کا فیصلہ تھا، جو بغیر کسی دباو کے لئے گیا۔ اس سے قبل یہ خبر آئی تھی کہ افسران نے نواز شریف اور ان کی بیٹی کے سوشل اسٹیٹس کو دیکھتے ہوئے جیل میں انہیں بی کلاس کی سہولیات دینے کا فیصلہ کیا ہے۔


دی انٹرنیشنل نیوز کے مطابق بی کلاس کے تحت قیدیوں کو جیل میں ایک الگ کچن دیا جاتا ہے، جہاں وہ الیکٹرک ہیٹر پر اپنا کھانا بنا سکتے ہیں۔ قیدیوں کو یہاں جائے نماز (نماز پڑھنے کے لئے چٹائی)، دوائی، سیونگ کریم، کپڑے، چار تولیے اور کھانے پینے کے دوسرے سامان فراہم کرائے جاتے ہیں۔ اس رپورٹ کے مطابق جیل افسران نے نواز شریف اور ان کی بیٹی مریم کو دو جوڑی کپڑے دیئے ہیں۔


اس کے ساتھ ہی اس رپورٹ میں ذرائع کے حوالے سے بتایا گیا کہ نواز شریف نے اپنے سیل کے واش روم (بیت الخلا اور غسل خانہ) میں صفائی کی کمی اور سیل میں بس ایک چٹائی اور پنکھا لگے ہونے کو لے کر شکایت بھی کی۔

نواز شریف نے ہفتہ کو اپنی قانونی ٹیم سے پانچ منٹ تک ملاقات کی تھی۔ ان کی ٹیم نے بتایا کہ اڈیالہ جیل میں شریف نہ کوئی بیڈ، نہ اے سی دی گئی ہے۔ انہیں پڑھنے کو اخبار بھی نہیں مہیا کرایا گیا۔ ٹیم کے مطابق نواز شریف کے ساتھ ان کی ملاقات کے دوران سینئر افسران بھی وہاں موجود تھے۔

واضح رہے کہ پورا معاملہ لندن میں پاش ایون فیلڈ ہاوس میں چار فلیٹوں کے مالکانہ حق سے متعلق بدعنوانی کا ہے۔ اس معاملے میں پاکستان کی ایک اکاونٹبلٹی کورٹ نے 6 جولائی کو نواز شریف کو 10 سال اور ان کی بیٹی مریم کو 7 سال کی سزا سنائی تھی۔ اس سے قبل نواز شریف کو پناما پیپرس معاملے میں نام آنے کے بعد کسی بھی طرح کے عوامی عہدہ کے لئے نااہل قرار دیا جا چکا ہے۔

 

 
First published: Jul 15, 2018 11:09 AM IST