உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مسعود اظہر کو اسامہ بن لادن کی طرح نہ مار دیا جائے، اس لئے پاکستان کے پاش علاقوں میں لے رکھا ہے پناہ: دعویٰ

    مسعود اظہر، پارلیمنٹ حملہ معاملہ، پٹھان کوٹ ایئر بیس دہشت گردانہ حملہ اور یہاں تک کہ جنوبی کشمیر کے پلوامہ میں مرکزی ریزرو پولیس فورس (سی آر پی ایف) کے قافلے پر ہوئے دہشت گردانہ حملے کو لے مطلوب ہے۔

    مسعود اظہر، پارلیمنٹ حملہ معاملہ، پٹھان کوٹ ایئر بیس دہشت گردانہ حملہ اور یہاں تک کہ جنوبی کشمیر کے پلوامہ میں مرکزی ریزرو پولیس فورس (سی آر پی ایف) کے قافلے پر ہوئے دہشت گردانہ حملے کو لے مطلوب ہے۔

    Masood Azhar Living in Pakistan Bahawalpur: جیش محمد کا سربراہ مسعود اظہر، پارلیمنٹ پر 2001 میں ہوئے حملے سے لے کر 2019 میں جموں وکشمیر کے پلوامہ دہشت گردانہ خود کش حملے سمیت کئی دہشت گردانہ حملوں کا ملزم ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی: ایک نئے ہندی نیوز چینل نے یہ دعویٰ کیا ہے کہ دنیا کا انتہائی مطلوب دہشت گرد مسعود اظہر پاکستان کے ایک رہائشی علاقے میں مقیم ہے تاکہ القاعدہ سربراہ اسامہ بن لادن کو مار گرانے والے امریکی مہم جیسی کارروائی اس کے خلاف ممکن نہ ہوسکے۔ مسعود اظہر، پارلیمنٹ پر 2001 میں ہوئے حملے سے لے کر سال 2019 میں جموں وکشمیر کے پلوامہ خود کش دہشت گردانہ حملے سمیت کئی دہشت گردانہ حملوں کا ملزم ہے۔

      ٹائمس گروپ کے نئے ہندی نیوز چینل ’ٹائمس ناو نوبھارت‘ کے مطابق، اس کے پاس ایسے ناقابل تردید ویڈیو تصاویر ہیں جو اس بات کی تصدیق کرتے ہیں کہ پاکستان اب بھی مسعود اظہر جیسے دہشت گرد سرغنہ کو محفوظ پناہ گاہ مہیا کرا رہا ہے، جو دہشت گرد تنظیم جیش محمد کا بھی سربراہ ہے۔ نیوز چینل نے ایک ریلیز میں دعویٰ کیا ہے کہ پاکستان کے بہاول پور میں مسعود اظہر کے دو ٹھکانے ہیں، جن میں سے ایک گھر عثمان علی مسجد اور نیشنل آرتھوپیڈک اینڈ جنرل اسپتال کے بالکل قریب واقع ہے۔

      ریلیز کے مطابق، اس کے گھر کے باہر پاکستانی فوج کے جوان تعینات کئے گئے ہیں۔ اس میں کہا گیا ہے کہ اس کا مقصد واضح ہے کہ اس کے گھر کے پاس ایک مسجد اور ایک اسپتال رہنے سے اسامہ بن لادن کے خلاف کی گئی کارروائی جیسی مہم نہیں چلائی جاسکے گی، جبکہ رہائشی علاقہ مسعود اظہر اور اس کے ساتھیوں کو حملہ ہونے کی صورت میں تنگ گلیوں سے بچ کر نکلنے کا موقع دے گا۔

       مسعود اظہر، پارلیمنٹ حملہ معاملہ، پٹھان کوٹ ایئر بیس دہشت گردانہ حملہ اور یہاں تک کہ جنوبی کشمیر کے پلوامہ میں مرکزی ریزرو پولیس فورس (سی آر پی ایف) کے قافلے پر ہوئے دہشت گردانہ حملے کو لے مطلوب ہے۔

      مسعود اظہر، پارلیمنٹ حملہ معاملہ، پٹھان کوٹ ایئر بیس دہشت گردانہ حملہ اور یہاں تک کہ جنوبی کشمیر کے پلوامہ میں مرکزی ریزرو پولیس فورس (سی آر پی ایف) کے قافلے پر ہوئے دہشت گردانہ حملے کو لے مطلوب ہے۔


      چینل کے مطابق، مسعود اظہر کا دوسرا ٹھکانہ بہاول پور میں ہی ہے، جو اس کے پہلے گھر سے تقریباً 4 کلو میٹر کی دوری پر واقع ہے۔ دوسرا گھر جامعہ مسجد کے پیچھے اور لاہور ہائی کورٹ کی بہاول پور بینچ سے ایک کلو میٹر کی دوری پر ہے، جبکہ محض تین کلو میٹر کی دوری پر ضلع عدالت ہے۔ چینل نے دعویٰ کیا ہے کہ پاکستانی فوج کے اہلکار وردی میں مسعود اظہر کے گھر کی پہرہ داری کرتے ہوئے نظر آئے ہیں۔ ریلیز میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ ’عالمی دہشت گرد ایک رہائشی علاقے میں ریاستی مہمان کے طور پر رہ رہا ہے‘۔

      مسعود اظہر، پارلیمنٹ حملہ معاملہ، پٹھان کوٹ ایئر بیس دہشت گردانہ حملہ اور یہاں تک کہ جنوبی کشمیر کے پلوامہ میں مرکزی ریزرو پولیس فورس (سی آر پی ایف) کے قافلے پر ہوئے دہشت گردانہ حملے کو لے مطلوب ہے۔ پلوامہ دہشت گردانہ خود کش حملے میں سی آرپی ایف کے 40 جوان شہید ہوگئے تھے۔ وہ تین دہشت گردوں میں سے ایک ہے، جسے 1999 کے قندھار طیارہ اغوا سانحہ کے بعد ہندوستانی افسران نے رہا کیا تھا۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: