உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Facebook Location: میٹا پر فیس بک لوکیشن ٹریکنگ کا مقدمہ، 37.5 ملین ڈالر کا تصفیہ

    فیس بک

    فیس بک

    جون 2018 میں فیس بک اور چیف ایگزیکٹیو مارک زکربرگ نے امریکی کانگریس کو بتایا کہ مینلو پارک، کیلیفورنیا میں قائم کمپنی مشہور افراد کو مخصوص علاقوں میں لوگوں تک پہنچنے میں مدد کرنے کے لیے مقام کا ڈیٹا استعمال کرتی ہے۔ Facebook Location

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • INTER, IndiaUSAUSA
    • Share this:
      Facebook Location: فیس بک کی پیرنٹ کمپنی میٹا (Meta) نے ایک مقدمے میں 37.5 ملین ڈالر کا تصفیہ کیا ہے جس میں کمپنی پر صارفین سے پوچھے بغیر اسمارٹ فونز کے ذریعے لوکیشن ڈیٹا (location data) کو ٹریک کرکے صارف کی رازداری کی خلاف ورزی کا الزام لگایا گیا ہے۔ میٹا کو حالیہ برسوں میں متعدد قانونی چیلنجوں کا سامنا کرنا پڑا ہے، اور حال ہی میں لوکیشن سے باخبر رہنے کے لیے ایک علیحدہ 90 ملین ڈالر کے تصفیہ تک پہنچا ہے۔

      واضح رہے کہ یہ نیا تصفیہ اس بات کو واضح کرتا ہے کہ یوزرس کے لوکیشن سروسز کو بند کرنے کے باوجود یوزرس کے لوکیشن کا تعین کرنے کے لیے آئی پی ایڈریسز کا استعمال کیا گیا ، جس سے یوزرس کی راز داری خطرہ میں پڑ گئی۔ اگر کوئی صارف اپنے لوکیشن کو ظاہر نہیں کرنا چاہتا تو بھی ایسے صارفین کو لوکیشن کو ٹریک کیا گیا، جس کے لیے میٹا نے مخصوص ٹکنالوجی کا استعمال کیا۔ جب کہ اگر کوئی یوزر لوکیشن آف رکھے تو اس کو لوکیشن پونٹ ظاہر نہیں ہوتا ہے۔

      رائٹرز کے مطابق فیس بک پر ٹارگٹڈ اشتہارات کے لیے ڈیٹا استعمال کرنے کا الزام عائد کیا گیا ہے۔ ابتدائی تصفیہ پیر کو سان فرانسسکو کی وفاقی عدالت میں دائر کیا گیا۔ فیس بک کے ترجمان ایمل وازکیز نے اس تصفیہ کی تصدیق کی ہے۔ یہ مقدمہ ریاستہائے متحدہ امریکہ میں فیس بک کے ان صارفین کا احاطہ کرتا ہے جنہوں نے 30 جنوری 2015 کے بعد کسی بھی وقت سوشل نیٹ ورک کا استعمال کیا۔

      صارفین نے کہا کہ اگرچہ وہ فیس بک کے ساتھ اپنے مقامات کا اشتراک نہیں کرنا چاہتے تھے، لیکن کمپنی نے اس کے باوجود ان کے آئی پی (انٹرنیٹ پروٹوکول) ایڈریس سے اندازہ لگایا کہ وہ کہاں ہیں اور اس معلومات کا استعمال انہیں ہدف بنا کر اشتہارات بھیجنے کے لیے کیا گیا ہے، تاکہ فیس بک کی آمدنی میں اشتہارات کی وجہ سے اضافہ ہوسکے۔

      یہ بھی پڑھیں: 


      جون 2018 میں فیس بک اور چیف ایگزیکٹیو مارک زکربرگ نے امریکی کانگریس کو بتایا کہ مینلو پارک، کیلیفورنیا میں قائم کمپنی مشہور افراد کو مخصوص علاقوں میں لوگوں تک پہنچنے میں مدد کرنے کے لیے مقام کا ڈیٹا استعمال کرتی ہے۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: