உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ایران میں شخص نے نئے گورنر کو اسٹیج پر جڑا تھپڑ ، وجہ جان کر رہ جائیں گے حیران

    ایران میں شخص نے نئے گورنر کو اسٹیج پر جڑا تھپڑ ، وجہ جان کر رہ جائیں گے حیران

    ایران میں شخص نے نئے گورنر کو اسٹیج پر جڑا تھپڑ ، وجہ جان کر رہ جائیں گے حیران

    ایران میں ایک شخص نے صوبائی گورنر کو اسٹیج پر چڑھ کر سب کے سامنے تھپڑ مار دیا ، لیکن اس کی وجہ سے جان کر آپ بھی حیران رہ جائیں گے ۔

    • Share this:
      تہران : ایران میں ایک شخص نے صوبائی گورنر کو اسٹیج پر چڑھ کر سب کے سامنے تھپڑ مار دیا ، لیکن اس کی وجہ سے جان کر آپ بھی حیران رہ جائیں گے ۔ یہ شخص صوبائی گورنر سے اس بات سے ناراض تھا کہ اس کی بیوی کو ایک مرد ڈاکٹر نے کورونا وائرس ویکسین لگائی تھی ۔ یہاں غور کرنے والی بات یہ ہے کہ صوبائی گورنر حلف لے رہے تھے ۔ عابدین خرم کو شمال مغربی ایران میں مشرقی آذربائیجان صوبہ کا گورنر مقرر کیا گیا ۔ اب اس تھپڑ واقعہ کا ویڈیو سوشل میڈیا پر جم کر وائرل ہورہا ہے اور بڑے مزے لے کر دیکھا جارہا ہے ۔

      فارس نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق عابدین خرم کو حلف برداری تقریب کے دوران مسلح افوج کے ایک رکن نے تھپڑ مار دیا ۔ خرم آئی آر جی سی کے ایک سابق صوبائی کمانڈر ہیں اور مبینہ طور پر شامی حزب اختلاف کی فورسز کے ذریعہ ان کا اغوا بھی کیا جاچکا ہے ۔


      تقریر کرنے کیلئے جیسے ہی خرم پوڈیم پر چڑھے ، ویسے ہی وہ شخص اسٹیج پر آیا اور خرم کے چہر پر زوردار تھپڑ ماردیا ۔ تھپڑ کی آواز پورے ہال میں سنائی پڑی ، کیونکہ اس دوران پوڈیم میں لگا مائیک آن تھا اور اس کی وجہ سے آواز کو سبھی لوگوں نے سنا ۔

      تھپڑ مارنے والا شخص اس بات کو لے کر ناخوش تھا کہ اس کی بیوی کو ایک مرد ہیلتھ کیئر کے ذریعہ کورونا ویکسین لگائی گئی تھی ۔ وہیں گورنر کو تھپڑ مارنے کے بعد وہاں کھڑے سیکورٹی اہلکاروں نے ملزم کو پکڑ لیا اور گھسیٹتے ہوئے دروازے کی طرف لے گئے ۔

       
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: