உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    زمین کو سیارچوں سے محفوظ رکھنے کا مشن، ناسا کا تجرباتی اسپیس کرافٹ سیارچے سے ٹکراگیا، جانئے پھر کیا ہوا؟

    Youtube Video

    خبر رساں ادارے اے پی کے مطابق پیر کو ناسا کا تجرباتی اسپیس کرافٹ خلا میں 22500 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے سیارچے سے ٹکرا گیا۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • inter, IndiaAmericaAmericaAmerica
    • Share this:
      امریکی خلائی ادارے ناسا (NASA) نے ایک اور بڑا کارنامہ کر دیا ہے۔ ناسا نے زمین کو سیارچوں سے محفوظ رکھنے کی مشق کے ایک حصے کے طور پر اپنے ڈارٹ مشن کو کامیابی سے انجام دے دیا۔ خبر رساں ادارے اے پی کے مطابق پیر کو ناسا کا تجرباتی اسپیس کرافٹ خلا میں 22500 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے سیارچے سے ٹکرا گیا۔ آپ کو بتاتے چلیں کہ اس ٹیسٹ کے ذریعے ناسا یہ دیکھنا چاہتا تھا کہ آیا زمین کی طرف آنے والے سیارچے کی سمت بدلی جا سکتی ہے یا نہیں۔

      بتایا گیا کہ یہ ٹیسٹ 27 ستمبر کو صبح 5 بج کر 45 منٹ پر ہوا جس میں ناسا کا ایک خلائی جہاز ڈارٹ نامی ڈیمورفوس سیارچے سے 14 ہزار میل فی گھنٹہ یا 22 ہزار 500 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے ٹکرا گیا جسے کامیاب بتایا گیا۔ اس ٹیسٹ کا مقصد ہے زمین کو کسی خطرناک خلائی چٹان کے ٹکراؤ سے محفوظ رکھنے کی جانچ پڑتال کرنا ہے۔


      ناسا کے مشن کنٹرول کی ایلینا ایڈمز نے اس ٹیسٹ کی کامیابی کا اعلان کیا۔ اگرچہ ناسا کا خلائی جہاز اس سیارچے سے ٹکرا گیا لیکن اس کا رخ کس سمت ہوا اور اس میں کتنی تبدیلی آئی ہے اس کے بارے میں ڈیٹا حاصل کرنے میں کچھ وقت لگے گا کیونکہ ٹکرانے کے بعد ڈارٹ کا ریڈیو سگنل اچانک بند ہو گیا۔

      کتے نے ہیلمیٹ پہن کر کی بائیک کی سواری، دیکھ کر سبھی لوگ بنانے لگے ویڈیو: وائرل


      کمپنی دے رہی ہے Mental Health ٹھیک رکھنے کیلئے 11دن کی چھٹی، تفصیل یہاں جانئے

      ناسا کے مطابق ڈارٹ اسپیس کرافٹ 23 ہزار 500 کلو میٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے سیارچے سے ٹکرایا، اس کامیابی پر نا سا کے انجئینرز اور ماہرین خوشی سے جھوم اٹھے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: