ہوم » نیوز » عالمی منظر

خارجہ سکریٹری نے نیپال کو سب لوگوں کے لئے قابل قبول آئین کی تشکیل کا مشورہ دیا

کاٹھمنڈو۔ نیپال میں نئی آئین کی تشکیل اور تھارو قبائل کی طرف سے اس کی مخالفت کے پیش نظر خارجہ سکریٹری سبرامنیم جے شنكر نے آج یہاں نیپال کے صدرجمہوریہ رامبرن یادو سے ملاقات کی اور انہيں وزیر اعظم نریندر مودی کی جانب سے سب کے لئے قابل قبول اور زیادہ سے زیادہ لوگوں کو شامل رکھنے والے دستور وضع کرنے کا پیغام دیا۔

  • UNI
  • Last Updated: Sep 19, 2015 08:12 AM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
خارجہ سکریٹری نے نیپال کو سب لوگوں کے لئے قابل قبول آئین کی تشکیل کا مشورہ دیا
کاٹھمنڈو۔ نیپال میں نئی آئین کی تشکیل اور تھارو قبائل کی طرف سے اس کی مخالفت کے پیش نظر خارجہ سکریٹری سبرامنیم جے شنكر نے آج یہاں نیپال کے صدرجمہوریہ رامبرن یادو سے ملاقات کی اور انہيں وزیر اعظم نریندر مودی کی جانب سے سب کے لئے قابل قبول اور زیادہ سے زیادہ لوگوں کو شامل رکھنے والے دستور وضع کرنے کا پیغام دیا۔

کاٹھمنڈو۔  نیپال میں نئی آئین کی تشکیل اور تھارو قبائل کی طرف سے اس کی مخالفت کے پیش نظر خارجہ سکریٹری سبرامنیم جے شنكر نے آج یہاں نیپال کے صدرجمہوریہ رامبرن یادو سے ملاقات کی اور انہيں وزیر اعظم نریندر مودی کی جانب سے سب کے لئے قابل قبول اور زیادہ سے زیادہ لوگوں کو شامل رکھنے والے دستور وضع کرنے کا پیغام دیا۔


مسٹر جے شنکر نے نیپال کی سیاسی پارٹیوں کے نمائندوں سے بھی ملاقات کرکے انہیں ہندوستان کی اس تشویش سے آگاہ کیا کہ اگر تمام فریقوں کے لئے قابل قبول آئین نہیں بنی تو اس ملک کی امن و امان اور کامیابی کے امکانات کے لئے خطرات پیدا ہو سکتے ہیں۔ خارجہ سکریٹری مسٹر جے شنکر وزیر اعظم مسٹر مودی کا پیغام لے کر آج صبح کاٹھمنڈو پہنچے۔ انہوں نے سب سے پہلے نیپالی کمیونسٹ پارٹی کے لیڈر کے پی شرما سے ملاقات کی اور پھر سفارتخانہ میں دوپہر کے کھانے کے موقع پر دوسری جماعتوں کے لیڈروں سے بات چیت کی۔ کمیونسٹ پارٹی کے لیڈر نے مسٹر جے شنكر کو بتایا کہ آئین ساز اسمبلی میں 85 فیصد لوگوں نے نئے دستور کے مسودے کو منظوری دی ہے۔ دوپہر کے بعد انہوں نے سرکای رہائش گاہ پر صدر جمہوریہ مسٹر رامبرن یادو سے ملاقات کی اور اس بات پر زور دیا کہ آئین میں ہر طبقے کے مسائل کو حل کیا جانا چاہئے۔اس سے ملک میں پائیدار امن اور پائیدار ترقی ممکن ہو سکے گی۔


دریں اثناء، نیپالی صدر کے میڈیا مشیر راجندر دہل کے حوالے سے ایک رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ نیپالی صدر کے ساتھ ہندوستانی خارجہ سکریٹری کی ملاقات ہندو نیپال تعلقات پر بات چیت ہوئی۔ اس میٹنگ میں صدر کے قانونی مشیر، وزارت خارجہ کے افسر، ہندوستانی سفیر رنجیت رائے وغیرہ موجود تھے۔


دوسری جانب آئین ساز اسمبلی کے صدر سبھاش چندر نیموانگ نے نیپال کے نئے متنازعہ آئین پر منظوری کی دستخط کردی ہے۔ آئین ساز اسمبلی کے کل 598 ارکان میں سے اب تک 537 ارکان نے نئی آئین کے مسودے پر دستخط کرچکے ہيں۔

مسٹر جے شنكر کی دیر شام آل نیپال کمیونسٹ پارٹی (ماؤنواز) کے لیڈر سابق وزیر اعظم پشپ کمل دہل پرچنڈ سے بھی ملاقات ہوئی۔ وہ کل وزیر اعظم سشیل کمار کوئرالا سے ملنے کے بعد نئی دہلی لوٹیں گے۔

First published: Sep 19, 2015 08:12 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading