اپنا ضلع منتخب کریں۔

    چینی کمیونسٹ پارٹی کی 20 ویں سالانہ کانگریس، صدر چین شی جن پنگ نے کونسی کہی اہم باتیں؟

    چین کے صدر شی جن پنگ۔ (فائل فوٹو)

    چین کے صدر شی جن پنگ۔ (فائل فوٹو)

    شی نے کہا کہ ایک صدی میں نظر نہ آنے والی ایسی اہم تبدیلیاں پوری دنیا میں تیز ہو رہی ہیں اور یہ کہ طاقت کے بین الاقوامی توازن میں اہم تبدیلی رونما ہو رہی ہے، جو چین کو اسٹریٹجک مواقع کے ساتھ ساتھ مواقع کے بارے میں سوچنے پر مجبور کرے گی۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • inter, IndiaChinaChinaChina
    • Share this:
      16 اکتوبر کو چینی کمیونسٹ پارٹی (سی سی پی) کی 20 ویں کانگریس کے افتتاحی اجلاس میں چینی صدر شی جن پنگ کی دو گھنٹے کی تقریر میں ہندوستان کا ذکر نہیں، جبکہ انہوں نے ملک کی زیرو کووڈ پالیسی سے لے کر تائیوان اور ہانگ کانگ تک وسیع پیمانے پر بات کی۔ اس دوران انھوں نے قومی سلامتی اور ترقی کی طرف منتقلی اور پیپلز لبریشن آرمی (PLA) کی جدید کاری پر بھی زور دیا ہے۔

      اس سے پتہ چلتا ہے کہ سی سی پی کی بات چیت ہندوستان پر بھی اثر انداز ہو سکتی ہے۔ سب سے پہلے ژی جن پنگ کا یہ دعویٰ کہ زیرو کووڈ۔19 پالیسی جان بچانے کے لیے درست ہے، اس کا مطلب یہ ہے کہ سرحدی کنٹرول میں جلد ہی کسی بھی وقت نرمی نہیں کی جائے گی، جس سے ہندوستانی طلبہ اور کاروباری افراد و اداروں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا۔ ویزوں پر حالیہ محدود پیش رفت کے باوجود ان میں سے ہزاروں چینی کووڈ پالیسیوں سے متاثر ہیں۔

      شی نے کہا کہ ایک صدی میں نظر نہ آنے والی ایسی اہم تبدیلیاں پوری دنیا میں تیز ہو رہی ہیں اور یہ کہ طاقت کے بین الاقوامی توازن میں اہم تبدیلی رونما ہو رہی ہے، جو چین کو اسٹریٹجک مواقع کے ساتھ ساتھ مواقع کے بارے میں سوچنے پر مجبور کرے گی۔

      یہ بھی پڑھیں: 


      ہم پورے بورڈ میں جنگی حالات میں فوجی تربیت کو تیز تر کریں گے تاکہ یہ دیکھیں کہ ہماری مسلح افواج کس طرح لڑ سکتی ہیں۔ ہم لوگوں کی جنگ کے لیے حکمت عملی تیار کرنے کے لیے نئی فوجی حکمت عملی کی رہنمائی کو اختراع کریں گے، اسٹریٹجک ڈیٹرنس کا ایک مضبوط نظام قائم کریں گے۔ شی نے 2027 تک فوج کو جدید بنانے کا عہد کیا تھا جس کے لیے پی ایل اے نے تنظیمی تبدیلیاں اور دیگر اپ گریڈ کیے تھے۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: