உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پاکستان کے وزیراعظم عمران خان کے ہاتھوں کرتارپورکاریڈور کا سنگ بنیاد، پاک آرمی چیف، سدھو، ہرسمرت کوراورپوری ہوئے شامل

    کرتارپور کاریڈور کا سنگ بنیاد رکھتے ہوئے پاکستان کے وزیراعظم عمران خان۔

    کرتارپور کاریڈور کا سنگ بنیاد رکھتے ہوئے پاکستان کے وزیراعظم عمران خان۔

    پاکستان کے وزیراعظم عمران خان نے آج کرتارپورکاریڈور کا سنگ بنیاد رکھا۔ اس موقع پرپاکستان کے وزیراعظم عمران خان اورپاکستانی وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی کے ساتھ نوجوت سنگھ سدھو پہلی صف میں بیٹھے نظرآئے۔

    • Share this:
      پاکستان کے وزیراعظم عمران خان نے آج کرتارپورکاریڈورکا سنگ بنیاد رکھا۔ اس تقریب میں پاکستانی فوج کےسربراہ قمرجاوید باجوا شریک ہوئے۔ وہیں ہندوستان نے اس تقریب میں شرکت کے لئے مرکزی وزیرہرسمرت کوربادل اورہردیپ سنگھ پوری کوبھیجا ہے جبکہ پنجاب کے کابینی وزیرنوجوت سنگھ سدھو ذاتی حیثیت سے اس تقریب میں شامل ہوئے۔

      پاکستان کے وزیراعظم عمران خان نے آج کرتارپورکاریڈورکا سنگ بنیاد رکھا۔ اس موقع پر خاص بات یہ رہی کہ نوجوت سنگھ سدھو پاکستان کے وزیراعظم عمران خان اوروزیرخارجہ شاہ محمود قریشی کے ساتھ پہلی صف میں بیٹھے نظرآئے۔ عمران خان کے ذریعہ کرتارپورکاریڈورکے سنگ بنیاد کے بعد یہ کہا جارہا ہے کہ ہند- پاک کے درمیان رشتوں سے متعلق ایک نئی قواعد کا آغاز ہوگا۔ حالانکہ وزیرخارجہ سشما سوراج نے واضح کردیا ہے کہ دہشت گردی اوربات چیت دونوں ایک ساتھ نہیں چل سکتے ہیں۔

      اس سے قبل مرکزی وزیرہردیپ سنگھ پوری نے پاکستان حکومت کا شکریہ بھی ادا کیا۔ اس تقریب میں شریک ہونے کے لئے پاکستان جانے سے قبل مرکزی وزیرہردیپ سنگھ پوری نے کہا کہ اس تیرتھ یاترا کو لے کرمیں خود میں بے حد خوش قسمت محسوس کررہا ہوں۔ سکھ طبقے کا طویل عرصے سے مطالبہ تھا۔ میں پاکستان حکومت کا بھی شکریہ ادا کرتا ہوں۔



      وہیں  پاکستان کے وزارت خارجہ کے ترجمان محمد فیصل نے کرتارپورکے لئے روانہ ہونے سے قبل اسلام آباد میں میڈیا سے کہا کہ کرتارپورسرحد کا کھلنا اقلیتوں کی فلاح کی سمت میں ایک تاریخی قدم ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ دکھاتا ہے کہ پاکستان اقلیتوں کا خیال رکھتا ہے۔ محمد فیصل نے یہ بھی کہ آئندہ سال نومبرمیں گرونانک دیوکی 550 ویں جینتی سے قبل گلیارے کی تعمیرمکمل ہوجائے گی۔

      Sidhu-Imran-bajwa-kartarpur-event-.transfer

      واضح رہے کہ پاکستان میں کرتاپورصاحب راوی ندی کے پارڈیرا بابا نانک سے قریب چارکلومیٹردورہے، اس کاریڈورکے ذریعہ ہندوستان کے سکھ عقیدتمندوں کو بغیرویزا کے آمدورفت کی سہولت مل سکے گی۔ اس سے قبل نائب صدروینکیا نائیڈواورپنجاب کے وزیراعلیٰ امریندرسنگھ نے پیرکو ہندوستان کی طرف سے کرتارپورصاحب گلیارے کی تعمیرکی بنیاد رکھی تھی۔ اس دوران کیپٹن امریندرسنگھ نے پاکستان کے آرمی چیف کو سخت وارننگ بھی دی تھی۔ انہوں نے واضح طورپرکہا تھا کہ میں بھی ایک فوجی ہوں اورپاکستانی آرمی چیف قمرباجوا سے بہت زیادہ سینئرہوں۔ اس لئے ان کومعلوم ہونا چاہئے کہ ایک فوجی کیا سوچتا ہے۔

      یہ بھی پڑھیں:    کرتارپورکاریڈورسنگ بنیاد: مرکزی وزیرنے پاکستان حکومت کا اداکیا شکریہ، پاک آرمی چیف بھی ہوں گے شریک



      First published: