ہوم » نیوز » عالمی منظر

عمران خان نےایل اوسی پارکرنے والے دراندازوں کو بتایا مدد گار، کہی یہ بات

پاکستان کےوزیراعظم عمران خان نےکہا ہے کہ اگرکشمیریوں کی مدد کرنےکےلئےپاکستان کی طرف سے کوئی بھی ایل اوسی پارکرتا ہےتوہندوستان دنیا کےسامنےاسے پاکستان اسپانسرڈ اسلامی دہشت گردی قراردیتا ہے۔

  • Share this:
عمران خان نےایل اوسی پارکرنے والے دراندازوں کو بتایا مدد گار، کہی یہ بات
پاکستان کے وزیراعظم عمران خان نےایک بارپھرکشمیرکا راگ الاپا۔

جموں وکشمیرمیں آرٹیکل -370 ہٹائےجانےکےبعد پاکستان نےبھلے ہی دنیا میں ہندوستان کو بدنام کرنے کی کوشش کی ہو، لیکن وہ اپنے مقصد میں کامیاب نہیں ہوسکا ہے۔ پاکستان کے وزیراعظم عمران خان دنیا کے تمام ممالک کے سامنے کشمیرکا موضوع اٹھاچکے ہیں۔ حالانکہ ہرجگہ سے انہیں مایوسی کا ہی سامنا کرنا پڑا ہے۔ کشمیرکےموضوع پرپاکستانی وزیراعظم عمران خان نےایک بارپھرٹوئٹ کرکے زہراگلا ہے۔

عمران خان نےکہا ہےکہ اگرکشمیریوں کی مدد کرنےکےلئے پاکستان کی طرف سےکوئی بھی ایل اوسی پارکرتا ہےتوہندوستان دنیا کےسامنےاسے پاکستان اسپانسرڈ دہشت گرد قرار دیتا ہے۔

عمران خان نےکہا کہ ہندوستان مسلسل پاکستان پراسلامی دہشت گردی کا الزام لگا کرہندوستان کےقبضے والے کشمیرمیں ہورہے تشدد سے پوری دنیا کی توجہ ہٹانےکی کوشش کررہا ہے۔ کشمیرمیں مسلسل تشدد میں اضافہ ہورہا ہے۔ واضح رہےکہ پاکستان کی دہشت گردانہ تنظیمیں گزشتہ کچھ وقت سےہندوستان میں دراندازی کی کوششوں میں مصروف ہیں، لیکن ہندوستانی سیکورٹی اہلکاران کی ہرکوشش کوناکام بنا رہے ہیں۔

عمران خان نےکشمیرمیں دراندازی کی کوشش کررہےدہشت گردوں کی پیروی کرتے ہوئے کہا کہ اگرپاکستان کی طرف سےکشمیریوں کی مدد کےلئےکوئی سرحد پارکرنے کی کوشش کرتا ہےتوہندوستان اسےدہشت گرد بتاکردنیا کےسامنےاسےاسلامی  دہشت گرد قراردیتا ہے۔ عمران خان نےکہا کہ کشمیرمیں گزشتہ دوماہ سےلوگ غیرانسانی حالات میں رہنےکو مجبور ہیں۔
First published: Oct 05, 2019 06:42 PM IST