ہوم » نیوز » عالمی منظر

پاک فوج کو پہلے سے تھی ایئر اسٹرائک کی بھنک، ہفتے بھر سے جیش کے ٹھکانوں کی کر رہی تھی حفاظت: رپورٹ

بتادیں کہ26 فروری کو پاک مقبوضہ کشیمر کے بالا کوٹ میں ہندستانی فضائیہ نے ہوائی حملہ کیا تھا جس میں کئی دہشت گرد مارے گئے تھے۔

  • Share this:
پاک فوج کو پہلے سے تھی ایئر اسٹرائک کی بھنک، ہفتے بھر سے جیش کے ٹھکانوں کی کر رہی تھی حفاظت: رپورٹ
بتادیں کہ26 فروری کو پاک مقبوضہ کشیمر کے بالا کوٹ میں ہندستانی فضائیہ نے ہوائی حملہ کیا تھا جس میں کئی دہشت گرد مارے گئے تھے۔

پاکستان کے بالاکوٹ  میں ہندستانی فضائیہ کی ایئر اسٹرائک پر ایک بڑا انکشاف ہوا ہے۔ انڈین ایکسپریس کی خبر کی مانیں تو پاکستانی فوج کو جیش محمد کے دہشت گردانہ کیمپ پر حملے کا اندیشہ پہلے ہی  ہو چکا تھا اور وہ ایئر اسٹرائک کے تقریبا ہفتے بھر پہلے سے جیش دہشت گردوں کی سکیورٹی میں لگی ہوئی تھی۔ انڈین ایکسپریس میں چھپی رپورٹ کے مطابق یہ سب باتیں بالاکوٹ میں جیش کے تعلیم القرآن مدرسے میں پڑھ رہے ایک طالب علم نے اپنے اہل خانہ کو بتائی  ہیں۔


واضح ہو کہ26 فروری کو پاک مقبوضہ کشیمر کے بالا کوٹ میں ہندستانی فضائیہ نے ہوائی حملہ کیا تھا جس میں کئی دہشت گرد مارے گئے تھے۔


اخبار نے اپنی رپورٹ میں بتایا کہ جس کیمپ پرایئر فورس نے ہوائی حملہ کیا اس کی سکیورٹی میں پاکستانی فوج تعینات تھی۔ وہیں ایئر اسٹرائک ہوتے ہی پاکستانی فوج کچھ دہشت گردوں کو سکیورٹی ٹھکانے میں بھی لے گئی تھی۔


اخبار میں چھپی رپورٹ کے مطابق جس دن ہندستانی فضائیہ نے حملہ کیا اس سے پہلے پاکستانی فوج جیش محمد کے کیمپ کی سکیورٹی میں تعینات ہو گئی تھی۔ بتادیں کہ26 فروری کی صبح جیش کے دہشت گرد سو رہے تھے تبھی اچانک انہیں ایک بڑا دھماکہ سنائی دیا۔ انہیں لگا کہ کوئی زلزلہ آیا ہے لیکن تبھی پاکستانی فوج کے جوان آئے اور انہیں آناً فاناً میں محفوظ مقام پر لے گئے لیکن پاکستانی فوج تمام دہشت گردوں کو محفوظ جگہ نہیں لے جا سکی'۔

مدرسے میں پڑھنے والے طلبا نے اپنے اہل خانہ کو بتایا ہے کہ حملے سے کچھ دن پہلے پاکستانی فوج کو وہاں تعینات کیا گیا تھا۔ اطلاعات کے مطابق مدرسے میں سکیورٹی اس لئے تعینات کی گئی تھی کیونکہ اس کی تصویر لیک ہو گئی تھی۔
First published: Mar 05, 2019 11:07 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading