ہوم » نیوز » عالمی منظر

سی اے اے کی مخالفت میں پاکستان کے سابق وزیر داخلہ نے میا خلیفہ کو دیا ’ آشیرواد‘، ہوئے ٹرول

سابقہ حکومت میں وزیر داخلہ رہے رحمان ملک نے ہندوستان کی مخالفت میں اندھے ہو کر کچھ ایسا کہہ دیا جو ان کی فضیحت کا سبب بن گیا ہے۔

  • Share this:
سی اے اے کی مخالفت میں پاکستان کے سابق وزیر داخلہ نے میا خلیفہ کو دیا ’ آشیرواد‘، ہوئے ٹرول
میا خلیفہ: فائل فوٹو

اسلام آباد۔ پاکستان کی عمران حکومت کے وزرا آئے دن ٹرول ہوتے رہتے ہیں۔ ان کی فضیحت ہوتی ہے۔ خاص طور سے اس وقت جب ہندوستان سے متعلق کوئی معاملہ ہوتا ہے تو وہ کسی بھی چیز کا فیکٹ چیک تک کرنے کی کوشش نہیں کرتے۔ تازہ معاملہ بھی کچھ ایسا ہی ہے۔ حالانکہ، اس بار عمران خان کی حکومت کے نہیں، بلکہ سابقہ حکومت میں وزیر داخلہ رہے رحمان ملک نے ہندوستان کی مخالفت میں اندھے ہو کر کچھ ایسا کہہ دیا جو ان کی فضیحت کا سبب بن گیا ہے۔


گزشتہ دنوں شہریت ترمیمی قانون ( سی اے اے) کے پاس ہونے کے بعد سے ہی پاکستان مسلسل ہندوستان پر حملہ کر رہا ہے جبکہ ہندوستان کی طرف سے واضح کر دیا گیا ہے کہ یہ اس کا داخلی معاملہ ہے۔ اسی قانون پر ہندوستان کو نشانہ بنانے کے لئے وہ خود لوگوں کے نشانے پر آ گئے۔ یہاں تک کہ پاکستان کی صحافی برادری نے بھی انہیں آئینہ دکھا دیا۔




رحمان ملک نے ایک ٹویٹ میں سابقہ پورن اسٹار میا خلیفہ کو ہندوستانی احتجاج کار سمجھا اور انہیں ’ آشیرواد‘ دیا۔ اکشے نام کے ایک ٹوئیٹر صارف نے لکھا ’ ہندوستانی فلمی دنیا کی طاقتور خواتین حجاب پہن کر اس شہریت ترمیمی قانون کی مخالفت کر رہی ہیں‘۔ اس کے جواب میں رحمان ملک نے لکھا ’ بھگوان اسے آشیرواد دے‘۔



حالانکہ، جب صارف کے ٹویٹ کی سچائی سے رحمان کا سامنا ہوا تو انہوں نے آشیرواد والا ٹویٹ ڈیلیٹ کر دیا۔ لیکن اس کے بعد اپنا غصہ دیگر ٹویٹس میں نکالا۔ انہوں نے لکھا ’ کئی ہندوستانی سیکس ورکرز نے بھی وزیر اعظم نریندر مودی کو ووٹ کیا ہے۔ کیا آپ انہیں بھی ٹرول کریں گے‘؟ وہیں، لوگ رحمان کے ٹویٹ کے بعد رکے نہیں اور ان کی فضیحت کر دی۔
First published: Dec 31, 2019 01:30 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading