உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پھر بے نقاب ہوا پاکستان، حافظ سعید کو گرفتاری سے پہلے دے دی ضمانت

    حافظ سعید ۔ فوٹو : رائٹرز

    حافظ سعید ۔ فوٹو : رائٹرز

    اے ٹی سی نے یہ ضمانت حافظ سعید کے ساتھ۔ساتھ حافظ مسعود، امیرحمزہ اور ملک ظفر کو دی ہے۔ ان سبھی کو 31 اگست کو 50،000 پاکستانی روپئے کے بانڈ بھرنے ہوں گے۔

    • Share this:
      پاکستان کے لاہور کی اے ٹی سی  نے جماعت الدعوہ کے سربراہ حافظ سعید  اور تین دیگر کو گرفتاری سے پہلے ہی ضمانت دے دی ہے۔ یہ ضمانت مدرسے کی زمین کے غیر قانونی استعمال سے متعلق معاملے میں دی گئی ہے۔
      بتادیں کہ اس سے پہلے خبر آئی تھی کہ پاکستان جلد ہی حافظ سعید کو سلاخوں کے پیچھے بھیجنے والا ہے۔  اس سے پہلے اقوام متحدہ کی جانب سے عالمی دہشت گرد قرار دئے جا چکے حافظ سعید پر پاکستان نے این جی او کے نام پر ٹیررفنڈنگ کیلئے فنڈ جمع کرنے کے معاملے درج کئے تھے۔
      اس کیلئے پاکستان حکومت نے حافظ سعید کے ساتھ اس کی تنظیم کے دیگر لوگوں کے خلاف معاملے درج کئے تھے۔ لاہور گجراں والااور ملتان میں این جی او کے نام پر ٹیرر فنڈنگ کیلئے پیسے جٹانے والے یہ معاملے الانفال ٹرسٹ ، دعوۃ الارشاد ٹرسٹ پر درج کئے گئے۔
      پنجاب پولیس کے سی ٹی ڈی نے اس معاملے میں حافظ سعید سمیت جماعت الدعوۃ کے 13 لیڈران کے خلاف 23 معاملے درج کئے تھے۔ ذرائع سےخبر ملی تھی کہ معاملہ درج ہونے کے بعد ان ملزموں کو کبھی بھی گرفتار کیاجا سکتا ہے۔ اب ایک دیگر معاملے میں حافظ سعید کو ضمانت دے دی گئی ہے۔
      اے ٹی سی نے یہ ضمانت حافظ سعید کے ساتھ۔ساتھ حافظ مسعود، امیرحمزہ اور ملک ظفر کو دی ہے۔ ان سبھی کو 31 اگست کو 50،000 پاکستانی روپئے کے بانڈ بھرنے ہوں گے۔
      First published: