ہوم » نیوز » عالمی منظر

سپریم کورٹ نے نواز شریف کی عرضی پر نیب سے جواب طلب کیا

نواز شریف نے سپریم کورٹ میں اسلام آباد ہائی کورٹ کے اس فیصلے کے خلاف عرضی دائر کی ہے جس میں العزیزیہ بدعنوانی معاملے میں ان کی ضمانت کی عرضی خارج کردی گئی تھی۔

  • UNI
  • Last Updated: Mar 19, 2019 09:39 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
سپریم کورٹ نے نواز شریف کی عرضی پر نیب سے جواب طلب کیا
پاکستان کے سابق وزیر اعظم نواز شریف: فائل فوٹو، رائٹرز۔

پاکستانی سپریم کورٹ نے منگل کو اسلام آباد ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف سابق وزیراعظم نواز شریف کی عرضی کی سماعت کرتے ہوئے ان سے متعلق قومی جوابدہی بیورو (نیب) سے جواب طلب کیا ہے۔ نواز شریف نے سپریم کورٹ میں اسلام آباد ہائی کورٹ کے اس فیصلے کے خلاف عرضی دائر کی ہے جس میں العزیزیہ بدعنوانی معاملے میں ان کی ضمانت کی عرضی خارج کردی گئی تھی۔

جیونیوز کی خبر کے مطابق چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ کی صدارت والی تین رکنی بنچ نے نیب کو ایک ہفتہ کے اندر جواب دینے کا حکم دیا ہے۔ تین رکنی بنچ میں چیف جسٹس کے علاوہ جسٹس سجاد علی شاہ اور جسٹس یحیی آفریدی شامل تھے۔

بنچ کے سامنے نواز کی پانچ میڈیکل رپورت پیش کی گئی جس پر چیف جسٹس نے تبصرہ کیا کہ عدالت سابق وزیراعظم کے سبھی میڈیکل رپورٹ کا جائزہ لے گی۔مسٹر شریف کے وکیل خواجہ حارث نے عدالت کو یہ بتانے پر کہ سابق وزیراعظم کا علاج کررہے ڈاکٹر ڈیوڈ لارینس لندن میں ہیں جس پر چیف جسٹس کھوسہ نے کہا کہ ’’ہم یہ جانتے ہیں کہ نواز شریف کا علاج لندن میں ہوا تھا۔‘‘

چیف جسٹس نے کہا کہ مسٹر شریف کی لندن کی میڈیکل رپورٹ پاکستان میں ڈاکٹر وں کو مہیا نہیں کرائی گئی ہے اس لئے عدالت اسلام آباد میں پی آئی ایم ایس میں ہوئی ان کی جانچ کی رپورٹ کا جائزہ لے گی۔اس معاملے کی اگلی سماعت 26 مارچ کو ہوگی۔  واضح رہے کہ اسلام آباد ہائی کورٹ نے 25 فروری کو سابق وزیراعظم کی ضمانت کی عرضی خارج کردی تھی۔

First published: Mar 19, 2019 09:39 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading