ہوم » نیوز » عالمی منظر

پاکستان کے سابق صدر پرویز مشرف کا پاسپورٹ منسوخ، نہیں آسکیں گے پاکستان

پاکستان نے سابق صدر پرویز مشرف کا قومی شناختی کارڈ اور پاسپورٹ منسوخ کردیا ہے، جس سے اب وہ پاکستان نہیں آسکیں گے۔ پاکستان نے مشرف کے خلاف ملک مخالف معاملے کی سماعت کررہی ایک خصوصی عدالت کے حکم پر یہ قدم اٹھا یا ہے۔

  • Share this:
پاکستان کے سابق صدر پرویز مشرف کا پاسپورٹ منسوخ، نہیں آسکیں گے پاکستان
پاکستان نے سابق صدر پرویز مشرف کا قومی شناختی کارڈ اور پاسپورٹ منسوخ کردیا ہے، جس سے اب وہ پاکستان نہیں آسکیں گے۔ پاکستان نے مشرف کے خلاف ملک مخالف معاملے کی سماعت کررہی ایک خصوصی عدالت کے حکم پر یہ قدم اٹھا یا ہے۔

اسلام آباد: پاکستان نے سابق صدر پرویز مشرف کا قومی شناختی کارڈ اور پاسپورٹ منسوخ کردیا ہے۔ پاکستان نے مشرف کے خلاف  ملک مخالف معاملے کی سماعت کررہی ایک خصوصی عدالت کے حکم  پر یہ قدم اٹھا یا ہے۔


پرویز مشرف کو 2007 میں ملک میں ایمرجنسی لگانے کے لئے مارچ 2014 میں ملک مخالفت کے الزامات میں قصور وار قرار دیا گیا تھا۔ ملک میں ایمرجنسی لگانے کے بعد کئی سینئر ججوں کو ان کے گھروں میں نظر بند کردیا گیا تھا۔ 100 سے زیادہ ججوں کو برخاست بھی کردیا گیا تھا۔


مشرف 18 مارچ 2016 کو علاج کے لئے دبئی چلے گے تھے۔ کچھ ماہ بعد پاکستان کی خصوصی عدالت نے انہیں بھگوڑا قرار دیا تھا۔ ساتھ ہی معاملے میں ان کے پیش نہ ہونے کے سبب ان کی جائیداد ضبط کرنے کا حکم بھی دیا تھا۔


عدالت نے مارچ میں حکم دیا تھا کہ حکومت ان کے قومی شناختی کارڈ اور پاسپورٹ کو منسوخ کردیں ۔ ایکسپریس ٹربیون نے رپورٹ دی ہے کہ نیشنل ڈاٹابیس رجسٹریشن اتھارٹی (این اے ڈی آر اے) نے مشرف کا شناختی کارڈ منسوخ کردیا ہے اور اس کے ساتھ ہی ان کا پاسپورٹ بھی خود بخود منسوخ ہوگیا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ اب یا تو وہ سیاسی پناہ لے لیں یا پاکستان لوٹنے کے لے خصوصی دستاویز کا انتظام کریں۔ مشرف نے 1999 سے 2008 تک پاکستان پر اقتدار کیاتھا۔ وہ سابق وزیر اعظم بے نظیر بھٹو کے قتل سمیت کئی مجرمانہ معاملوں کو لے کر پاکستان میں وانٹیڈ ہیں۔

 

 

 
First published: Jun 08, 2018 05:59 PM IST