உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

     پاکستان: مدرسے کا ٹیچر بنا حیوان، کمرے میں لے جاکر 10 لڑکوں کے ساتھ کی بدفعلی

    مدرسے کے طلباء کے والدین کی جانب سے ایف آئی آر درج کرنے کے بعد پولیس نے استاد کو گرفتار کرلیا۔ ایف آئی آر میں الزام لگایا گیا ہے کہ بشیر ان کے بچوں کو زبردستی مدرسہ میں اپنے کمرے میں لے گیا اور ان کے ساتھ بدفعلی کی۔

    مدرسے کے طلباء کے والدین کی جانب سے ایف آئی آر درج کرنے کے بعد پولیس نے استاد کو گرفتار کرلیا۔ ایف آئی آر میں الزام لگایا گیا ہے کہ بشیر ان کے بچوں کو زبردستی مدرسہ میں اپنے کمرے میں لے گیا اور ان کے ساتھ بدفعلی کی۔

    مدرسے کے طلباء کے والدین کی جانب سے ایف آئی آر درج کرنے کے بعد پولیس نے استاد کو گرفتار کرلیا۔ ایف آئی آر میں الزام لگایا گیا ہے کہ بشیر ان کے بچوں کو زبردستی مدرسہ میں اپنے کمرے میں لے گیا اور ان کے ساتھ بدفعلی کی۔

    • Share this:
      sexual exploitation from boy: پاکستان کے صوبہ پنجاب میں بدھ کے روز ایک مدرسے کے ٹیچر کو کم از کم 10 نابالغ طالب علم  کے ساتھ زیادتی کے الزام میں گرفتار کر لیا گیا۔ پولیس کے مطابق متعلقہ پولیس افسر اختر فاروق نے بدھ کو بتایا کہ لاہور سے تقریباً 500 کلومیٹر دور صادق آباد رحیم یار خان کے علاقے بھٹہ واہن میں ملزم قاری بشیر نے گزشتہ دو دنوں میں لڑکوں سے چھیڑ چھاڑ کا اعتراف کیا ہے۔ اسے حراست میں لے لیا گیا ہے۔

      مدرسے کے طلباء کے والدین کی جانب سے ایف آئی آر درج کرنے کے بعد پولیس نے استاد کو گرفتار کرلیا۔ ایف آئی آر میں الزام لگایا گیا ہے کہ بشیر ان کے بچوں کو زبردستی مدرسہ میں اپنے کمرے میں لے گیا اور ان کے ساتھ بدفعلی کی۔ پولیس نے چاروں زخمیوں کو طبی معائنے کے لیے اسپتال بھیج دیا ہے۔

      فاروق نے کہا، "ہم نے دوسرے طالب علموں سے درخواست کی ہے کہ اگر ان کے ساتھ بھی جنسی زیادتی ہوئی ہے تو پولیس کو اطلاع دیں۔ ایک پولیس اہلکار کے مطابق متاثرین نے اپنے بیان میں کہا کہ ملزم نے بد فعلی کرنے کے بعد کہا کہ اگر اس نے اس بارے میں کسی کو کچھ بتایا تو وہ انہیں جان سے مار دے گا۔

      صرف1,616روپے میں ہوائی سفر کرنے کا موقع! Indigo لایا Sweet 16 سیل

      وہیل چیئر پر Food Delivery کرتے شخص کا ویڈیو ہوا وائرل، لوگوں نے کہا، کچھ بھی ناممکن نہیں

       

      افسر نے بتایا کہ ملزمان سے پوچھ گچھ جاری ہے اور متاثرین کی تعداد 10 سے زیادہ ہو سکتی ہے۔ بشیر کو مزید تفتیش کے لیے چار روزہ پولیس تحویل میں بھیج دیا گیا ہے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: