உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    امریکی صحافی نے کردی عمران خان کی سرعام بےعزتی، کہا- آپ وزیراعظم نہیں، ویلڈرہیں

    بتادیں کہ 50,000  ہر ماہ تنخواہ داروں  اور33 ہزار333 روپئے غیر تنخواہ داروں کے لئےرکھا گیا ہے۔ عمران خان حکومت کا ٹارگیٹ ہے کہ نئے مالی سال میں صرف انکم ٹٰکس سے 258 ارب روپئے جٹائے جا سکے۔

    بتادیں کہ 50,000  ہر ماہ تنخواہ داروں  اور33 ہزار333 روپئے غیر تنخواہ داروں کے لئےرکھا گیا ہے۔ عمران خان حکومت کا ٹارگیٹ ہے کہ نئے مالی سال میں صرف انکم ٹٰکس سے 258 ارب روپئے جٹائے جا سکے۔

    پاکستان کے وزیراعظم عمران خان گزشتہ ہفتے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں شرکت کے لئے نیویارک میں تھے۔ اسی دوران انہوں نے امریکہ کے ٹی وی چینل ایم ایس این بی سی کے پروگرام میں شرکت کی۔

    • Share this:
      واشنگٹن: ان دنوں پاکستان کے وزیراعظم عمران خان کے دن اچھے نہیں چل رہے ہیں۔ کشمیرکے موضوع کولےکروہ پہلے ہی بین الاقوامی اسٹیج پرالگ تھلگ پڑچکے ہیں۔ اس کےعلاوہ دہشت گردی پردیئے گئے بیان کولے کربھی ان کی اپنے گھرمیں ہی بے عزتی ہو رہی ہے اوراب امریکہ کےایک صحافی نے پاکستان کے وزیراعظم کی ٹی وی پرسرعام بے عزتی کردی۔ انہوں نےعمران خان کوویلڈرکہہ ڈالا۔

      کیا ہے پورا معاملہ؟

      گزشتہ ہفتے عمران خان اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں حصہ لینے کے لئے نیویارک میں تھے۔ اسی دوران انہوں نے امریکہ کے ٹی وی چینل ایم ایس این بی سی کے پروگرام میں شرکت کی۔ شوکے دوران عمران خان نے نیویارک کی انفرااسٹرکچر کولے کرشکایت کی۔ انہوں نے کہا 'نیویارک میں سڑکوں کی حالت دیکھئے۔ افغانستان میں امریکہ 'ایک بیکارکے جنگ' میں پیسہ لگا رہا ہے۔ دوسری طرف چین کودیکھئے وہ دنیا کا شاندار انفرااسٹرکچر تیار کررہا ہے'۔


      عمران خان کی ان باتوں کوسن کراسٹوڈیو میں بیٹھا اینکرپہلے توہنسنے لگا اورپھرانہوں نے پاکستان کے وزیراعظم کی بولتی بند کردی۔ اینکرنے کہا 'آپ اس وقت ایک وزیراعظم کی طرح نہیں بول رہے ہیں، بلکہ ایسا لگ رہا ہے کہ کوئی برانکس کمپنی کا ویلڈربول رہا ہو'۔ واضح رہے کہ برانکس نیویارک میں ایک ویلڈنگ کمپنی ہے۔
      First published: