உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پاکستان: PM شہباز شریف کے بیٹے حمزہ شریف بنے پنجاب کے نئے وزیر اعلیٰ، ہنگامہ آرائی کے درمیان ہوا الیکشن

    پاکستان: PM شہباز شریف کے بیٹے حمزہ بنے پنجاب کے نئے وزیر اعلیٰ

    پاکستان: PM شہباز شریف کے بیٹے حمزہ بنے پنجاب کے نئے وزیر اعلیٰ

    Pakistan Punjab New CM: پاکستان میں وزیراعظم شہباز شریف کے بیٹے حمزہ شریف ہفتہ کے روز پنجاب صوبہ کے نئے وزیراعلیٰ منتخب کئے گئے ہیں۔ پاکستان مسلم لیگ- نواز کے لیڈر حمزہ شریف کو وزیر اعلیٰ کے الیکشن میں 197 ووٹ حاصل ہوئے۔ سابق وزیراعظم عمران خان کی پارٹی پاکستان تحریک انصاف (PTI) نے الیکشن کا بائیکاٹ کیا، جس کے سبب حمزہ کے حریف پرویز الٰہی کو کوئی ووٹ نہیں ملا۔

    • Share this:
      لاہور: پاکستان میں نئی حکومت بننے کے بعد سیاسی تبدیلیاں شروع ہونے لگی ہیں۔ وزیراعظم شہباز شریف (Pakistan PM Shehbaz Sharif) کے بیٹے حمزہ شریف (Hamza Sharif) ہفتہ کے روز پنجاب صوبہ کے نئے وزیر اعلیٰ منتخب کرلئے گئے ہیں۔ پاکستان مسلم لیگ نواز شریف کے لیڈر حمزہ کو وزیر اعلیٰ کے الیکشن میں 197 ووٹ حاصل ہوئے۔ سابق وزیراعظم عمران خان کی پارٹی پاکستان تحریک انصاف (PTI) نے الیکشن کا بائیکاٹ کیا، جس کے سبب حمزہ کے حریف پرویز الٰہی کو کوئی ووٹ نہیں ملا۔

      پاکستان کی پنجاب اسمبلی میں ڈپٹی اسپیکر دوست محمد مزاری کے ساتھ ہاتھا پائی ہوئی اور پھر ہنگامہ شروع ہوگیا۔ محمد مزاری نے کہا، ’مجھ پر حملہ کرنے والے پاکستان میں مارشل لا چاہتے ہیں، لیکن کامیاب نہیں ہوں گے‘۔

      وہیں اس کے جواب میں پی ٹی آئی کے پرویز الٰہی نے کہا، ’آج اسمبلی میں جو کچھ بھی ہوا، اس کے لئے ڈپٹی اسپیکر مزاری کو ذمہ دار ٹھہرایا جانا چاہئے‘۔ انہوں نے دعویٰ کیا کہ ’رانا مسعود نے مجھے پریشان کیا، جس کے بعد میں بے ہوش ہوگیا‘۔

      وہیں پنجاب کے نومنتخب وزیر اعلیٰ حمزہ شریف نے کہا، ’جب ہم لابی میں بیٹھے تھے اور پتہ چلا کہ آپ کو نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ میرا ماننا ہے کہ یہ آپ پر نہیں بلکہ اس ایوان کے احترام پر حملہ ہے۔ وزیر اعلیٰ حمزہ نے مزاری کی بہادری کی تعریف کی اور کہا کہ انہوں نے مشکل حالات میں اپنی ذمہ داری نبھائی۔

      یہ بھی پڑھیں۔

      Pakistan کے جیٹ طیاروں نے افغانستان پر گرائے بم، خواتین اور بچوں سمیت 30 کی موت

      حمزہ شریف نے کہا، پاکستان گزشتہ 15 دنوں سے پریشان اور فکر مند تھا، لیکن اس سب کے درمیان آج جمہوریت کی جیت ہوئی۔ یہ میری جیت نہیں ہے، یہ یہاں بیٹھے ہوئے تمام اراکین کی جیت ہے۔ انہوں نے کہا، ’میں عمران خان سے پوچھنا چاہتا ہوں کہ آپ نے ایک کروڑ نوکریوں، 50 لاکھ گھروں کا وعدہ کیوں کیا، جبکہ اس وقت نوجوان بے روزگار ہیں‘۔

      واضح رہے کہ پنجاب کی قومی اسمبلی میں ایک امیدوار کو وزیر اعلیٰ بننے کے لئے 186 ووٹ چاہئے۔ حمزہ شریف 6 ستمبر 2018 سے ایوان کے رکن ہیں۔ اس سے پہلے حمزہ شریف کے والد شہباز شریف تین بار پنجاب صوبہ کے وزیر اعلیٰ رہ چکے ہیں۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: