ہوم » نیوز » عالمی منظر

‘‘آئی ایس آئی کے سابق سربراہ بولے : ’’پاکستان کو صحیح قیمت پر کلبھوشن جادھو کو واپس کرنا تھا

پاکستان کی خوفیہ ایجنسی آئی ایس آئی کے سابق سربراہ اسد دورانی کا کہنا ہےکہ پاکستان کی جیل میں بند کلبھوشن جادھو کے کیس کو صحیح طریقہ سے حل کرنے کی کوشش نہیں کی گئی ۔

  • Share this:
‘‘آئی ایس آئی کے سابق سربراہ بولے : ’’پاکستان کو صحیح قیمت پر کلبھوشن جادھو کو واپس کرنا تھا
پاکستان کی خوفیہ ایجنسی آئی ایس آئی کے سابق سربراہ اسد دورانی کا کہنا ہےکہ پاکستان کی جیل میں بند کلبھوشن جادھو کے کیس کو صحیح طریقہ سے حل کرنے کی کوشش نہیں کی گئی ۔


پاکستان کی خوفہ ایجنسی آئی ایس آئی کے سابق سربراہ اسد دورانی کا کہنا ہےکہ پاکستان کی جیل میں بند کلبھوشن جادھو کے کیس کو صحیح طریقہ سے حل کرنے کی کوشش نہیں کی گئی ۔ اسد دورانی کے مطابق پاکستان کو صحیح قیمت پر کلبھوشن جادھو کو ہندوستان واپس کر دینا چاہئے تھا۔ اسد دورانی نے یہ باتیں خوفیہ ایجنسی اور ان کے کارناموں مبنی کتاب ’’ اسپائے کرونکلس راو ، آئی ایس آئی انڈ دی الیجن آف پیس ‘‘ میس لکھی ہے ۔


دورانی نے لکھا ہے ’’ اس ایشو پر خاموش رہنے کی ضرورت تھی ۔ حقیقت میں اسے احسان  کے طور پر استعمال کیا جا سکتا تھا۔ پاکستان  کے قومی سکیورٹی اڈوائزر جنجوآ کو اجیت ڈوالا کو فون کرنا تھا اور کہنا تھا، ہمیں آپ کا شہری ملا ہے لیکن آپ فکر نہ کریں ۔ اس کا خیال رکھا جائےگا ۔ اس درمیان آپ ہمیں یہ بتائیے کہ اس کے ساتھ کیا کیا جائے‘‘۔


اس کتاب نے درانے اور ہندوستانی خوفیہ ایجنسی را کے سابق سربراہ اے ایس دولت کی بات چیت شائع ہوئی ہے ۔ کتاب کے لئے ہوئی اس بات چیت کو صحافی آدتیہ سنہا نے موڈریٹ کیا ہے ۔

ایک اور باب میں ، دولت جادھو پر بات چیت جاری رکھتے ہوئے اور کہتے ہیں کہ جادھو کو پاکستان سے باہر نکالنا امریکہ کے مقابلہ زیادہ آسان تھا۔

اس کے جواب میں دورانی نے کہا ’’ میں اپنے دوست سے اتفاق رکھتا ہوں کہ اس کیس کو خراب طریقہ سے سمبھالنے کےباوجود جادھو واپس آجائےگے۔ بہتر طریقہ یہ ہو سکتاہےکہ اس کی اطلاع را کو دینی چاہئے تھی اور صحیح قیمت پر اسے ہندوستان کے حوالہ کر دینا چاہئے تھا‘‘۔
واضح ہو کہ کلبھوشن ہندوستانی بحریہ افسر ہیں جنہیں مبنہ طور پر جاسوسی کے الزام میں مارچ 2016 میں بلوچستان سے گرفتار کیا گیا تھا ۔ دوسری جانب ہندوستان اس الزام سے مسلسل انکار کرتا رہا ہے ۔

 
First published: May 22, 2018 06:31 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading