உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پاکستان : ٹک ٹاک اسٹار حریم شاہ کو ملی دھمکی ، وزیر ریل سے بات چیت کا ویڈیو ہوگیا تھا وائرل

    پاکستان : ٹک ٹاک اسٹار حریم شاہ کو مل رہیں دھمکیاں ، وزیر ریل سے بات چیت کا ویڈیو ہوگیا تھا وائرل

    پاکستان : ٹک ٹاک اسٹار حریم شاہ کو مل رہیں دھمکیاں ، وزیر ریل سے بات چیت کا ویڈیو ہوگیا تھا وائرل

    حریم نے سال 2019 کے آخری ہفتہ میں ٹک ٹاک پر ایک ویڈیو شیئر کیا تھا ۔ پاکستان کے اخبار دی ٹربیون کے مطابق ویڈیو میں وہ وزیر ریل شیخ رشید کے ساتھ بات چیت کرتی نظر آرہی تھیں ۔

    • Share this:
      پاکستان کے وزیر ریل شیخ رشید کے ساتھ ہوئی بات چیت کا ویڈیو لیک ہونے کے بعد حال ہی میں سرخیوں میں آئی ٹک ٹاک اسٹار حریم شاہ کو دھمکیاں ملنی شروع ہوگئی ہیں ۔ حریم نے نیوز چینل جیو پاکستان سے بات چیت میں بتایا کہ ان کی تصویریں فوٹو شاپ کرکے وائرل کی جارہی ہیں ۔ ساتھ ہی انہیں طرح طرح کی دھمکیاں بھی مل رہی ہیں ۔ سوشل میڈیا پر حریم کا ایک اور ویڈیو وائرل ہوا تھا ۔ یہ ویڈیو پاکستان کی وزارت خارجہ کے پریس کانفرنس روم کا ہے ۔ ویڈیو میں حریم ایک کرسی پر بیٹھی ہیں اور اس کرسی کے پیچھے محمد علی جناح کی تصویر ہے ۔ کچھ لوگوں کا دعوی ہے کہ یہ وزیر اعظم عمران خان کے ہال کی تصویر ہے ۔

      پاکستانی وزارت خارجہ نے اس معاملہ کی جانچ شروع کردی ہے ۔ وزارت یہ پتہ لگانے کی کوشش کررہی ہے کہ حریم کانفرنس روم تک کیسے پہنچ گئی ۔ پاکستانی نیوز چینل کو دئے انٹرویو میں حریم شاہ نے وزارت خارجہ کے کانفرنس روم تک پہنچنے کے معاملہ پر بھی جواب دیا ۔ انہوں نے کہا کہ ان کیلئے یہ کوئی بڑی بات نہیں ہے ۔ وہ وزیٹر کے طور پر اس کمرے میں گئی تھیں ۔ انہوں نے بتایا کہ وہ قومی اسمبلی بھی جاتی رہتی ہیں ۔ وہاں کبھی بھی کسی نے انہیں نہیں روکا ۔ پاکستانی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق وزارت خارجہ نے بھی کہا ہے کہ حریم وہاں وزیٹر کے طور پر گئی تھی ، لیکن کانفرنس روم میں کسی اسٹاف کی مدد سے گئی تھی ۔ حریم نے کہا کہ میں نے قومی اسمبلی سے پاس لیا ، پھر وزارت خارجہ میں داخل ہوگئی ۔


      حریم شاہ نے جیو پاکستان سے گفتگو کے دوران کہا کہ میں پاکستان تحریک انصاف کی حامی ہوں ۔ ساتھ ہی وزیر اعظم عمران خان کی مداح بھی ہوں ۔ میرا پورا کنبہ پی ٹی آئی میں ہے ۔ ہم سبھی پی ٹی آئی کارکنان ہیں ، اس لئے ان کے ساتھ ویڈیو بناتے ہیں ۔ شیخ رشید کے ساتھ ویڈیو کی سچائی پر حریم نے کہا کہ یہ فرضی ویڈیو نہیں ہے ۔ حالانکہ سوشل میڈیا پر ویڈیو کو فرضی بتایا جارہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اس طرح کی چیزوں کو پی ٹی آئی سے جوڑنا صحیح نہیں ہے ۔ تاہم ابھی تک یہ واضح نہیں ہوپایا ہے کہ حریم اور وزیر ریل کی بات چیت کا ویڈیو لیک کیسے ہوا ۔


      خیال رہے کہ حریم نے سال 2019 کے آخری ہفتہ میں ٹک ٹاک پر ایک ویڈیو شیئر کیا تھا ۔ پاکستان کے اخبار دی ٹربیون کے مطابق ویڈیو میں وہ وزیر ریل شیخ رشید کے ساتھ بات چیت کرتی نظر آرہی تھیں ۔ بات چیت کے دوران انہوں نے الزام لگایا کہ شیخ رشید انہیں ننگی تصویریں بھیجتے تھے ۔ ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ رشید کے ساتھ ان کی ویڈیو کال پر بات چیت ہورہی ہے ۔
      First published: