உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    عمران خان کو بڑا جھٹکا ، فروری 2021 تک گرے لسٹ میں ہی رے گا پاکستان

    عمران خان کو بڑا جھٹکا ، ابھی گرے لسٹ میں ہی رے گا پاکستان : ذرائع۔ فائل فوٹو

    عمران خان کو بڑا جھٹکا ، ابھی گرے لسٹ میں ہی رے گا پاکستان : ذرائع۔ فائل فوٹو

    عمران خان کی حکومت ایف اے ٹی ایف کے 27 پوائنٹس میں سے چھ پر عمل درآمد کرنے میں ناکام رہی ہے ۔ جون 2018 میں ایف اے ٹی ایف نے پاکستان کو گرے لسٹ میں ڈالا تھا ۔

    • Share this:
      پاکستان کو ایف اے ٹی ایف سے بڑا جھٹکا لگا ہے ۔ پاکستان ابھی گرے لسٹ میں ہی رہے گا ۔ دراصل عمران خان کی حکومت ایف اے ٹی ایف کے 27 پوائنٹس میں سے چھ پر عمل درآمد کرنے میں ناکام رہی ہے ۔ جون 2018 میں ایف اے ٹی ایف نے پاکستان کو گرے لسٹ میں ڈالا تھا ۔ اس وقت پاکستان کو 27 نکات پر مشتمل ایکشن پلان کو 2019 کے آخر تک لاگو کرنے کا حکم دیا گیا تھا ۔ حالانکہ کورونا وائرس کو دیکھتے ہوئے اس کی مدت بڑھا دی گئی تھی ۔

      ایسا بتایا جارہا ہے کہ جن نکات پر عمل درآمد کرنے میں پاکستان ناکام رہا ہے ، ان میں جیش محمد چیف مسعود اظہر اور لشکر طیبہ سے وابستہ لکھوی جیسے اقوام متحدہ سے نامزد دہشت گردوں کے خلاف کارروائی شامل ہے ۔

      دنیا کے چار ممالک نہیں ہیں پاکستان کی کارروائی سے مطمئن

      دنیا کے چار بڑے ممالک امریکہ ، برطانیہ ، فرانس اور جرمنی بھی اسلام آباد کی اپنی سرزمین پر سرگرم دہشت گرد تنظیموں کے خلاف کارروائی کرنے کے عزم سے مطمئن نہیں تھے ۔ پاکستان کو گرے لسٹ میں برقرار رکھنے کی یہ بھی ایک وجہ ہوسکتی ہے ۔

      ادھر ہندوستان نے جمعرات کو کہا تھا کہ پاکستان کے ذریعہ کے ذریعہ دہشت گرد تنظیموں اور مسعود اظہر و ذکی الرحمان لکھوی جیسے دشہت گردوں کو محفوظ ماحول فراہم کرایا جانا جاری ہے ۔ وزارت خارجہ کے ترجمان نے ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ پاکستان نے دہشت گردوں کو مالی مدد کو روکنے کیلئے فائنانشیل ٹاسک فورس ( ایف اے ٹی ایف ) کے ذریعہ دئے گئے 27 نکات میں سے صرف 21 پر ہی کام کیا ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: