உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پاکستان میں 127 روپئے لیٹر ہوا پٹرول، عمران خان نے کہی ایسی بات، لوگ اڑا رہے ہیں جم کر مذاق

    پاکستان میں 127 روپئے لیٹر ہوا پٹرول، عمران خان نے کہی ایسی بات، لوگ اڑا رہے ہیں جم کر مذاق

    پاکستان میں 127 روپئے لیٹر ہوا پٹرول، عمران خان نے کہی ایسی بات، لوگ اڑا رہے ہیں جم کر مذاق

    پاکستان کی عمران خان حکومت (Imran Khan Government) اس پر تشویش ظاہر کرنے کے بجائے عوام کو ایسے عجیب وغریب ترک دے رہی ہے، جو اس کے گلے نہیں اتر رہے ہیں۔

    • Share this:
      اسلام آباد: ہندوستان (Petrol-Diesel Price hike in India) کی نہیں، بلکہ پڑوسی ملک پاکستان میں بھی پٹرول - ڈیزل کی قیمتیں (Petrol Diesel Price hike in Pakistan) آسمان چھو رہی ہیں۔ پاکستان میں ایک دن میں ان کی قیمتوں میں 4 سے 9 روپئے کا اضافہ کردیا ہے۔ اس وقت پاکستان میں پٹرول کی قیمت 127 روپئے فی لیٹر تک پہنچ گئی ہے، لیکن عمران خان حکومت (Imran Khan Government) اس پر تشویش ظاہر کرنے کے بجائے عوام کو ایسے عجیب وغریب ترک دے رہی ہے، جو اس کے گلے نہیں اتر رہے ہیں۔

      پاکستان کے وزیر خزانہ شوکت تارن نے کہا کہ پاکستان میں پٹرول کی قیمتیں اس علاقے کے دوسرے ممالک جیسے ہندوستان اور بنگلہ دیش سے کم ہیں۔ واضح رہے کہ عمران خان حکومت (Imran Khan Government) نے ایک دن میں پٹرول کی قیمتوں میں 4 روپئے اور ڈیژل کی قیمت 9 روپئے کے قریب بڑھا دی ہے۔ وہیں، کیروسین 7 روپئے تک مہنگا ہوا ہے۔ ہائی اسپیڈ ڈیزل بھی 2 روپئے فی لیٹر مہنگا ہوگیا ہے۔

      بڑھتی قیمتوں پر کیا بولے وزیر خزانہ

      شوکت تارن نے کہا کہ دنیا میں صرف 16 ملک ہیں، جہاں پٹرول کی قیمتیں کم ہیں۔ یہ سبھی ملک تیل پیدا کرنے والے ہیں۔ ان کا پنا تیل ہے۔ ہمارے یہاں اس علاقے میں اور دنیا میں سب سے زیادہ سستا تیل ہے۔ اس سے زیادہ سستا کیسے ملے گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ اگر حکومت پٹرول کے دام کم کرتی ہے تو اسے خسارہ اپنی جیب سے پورا کرنا ہوگا۔ پٹرولیم پر لگنے والے ٹیکس کو سال 2018 کے 30 روپئے فی لیٹر سے گھٹ کر 2 سے 3 روپئے فی لیٹر کر دیا گیا ہے۔

      پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں کتنا اضافہ

      ڈان نیوز کی رپورٹ کے مطابق، عمران حکومت نے پہلے ہی 15 ستمبر کو پٹرولیم کی قیمتوں میں 5 سے 6 روپئے کا اضافہ کیا تھا۔ ہندوستان کے مقابلے پاکستان میں اب پٹرول کی قیمت 127.30 روپئے فی لیٹر، ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت 122.04 روپئے فی لیٹر، مٹی کے تیل کی قیمت 99.31 روپئے اور ہلکے ڈیزل تیل کی قیمت 99.51 روپئے فی لیٹر ہو گئی ہے۔ اضافہ شدہ قیمتیں جمعہ سے ہی موثر ہیں۔

      پاکستان حکومت اٹھا رہی ہے بوجھ: وزیر خزانہ

      وزیر خزانہ نے کہا، ’ہم پٹرولیم پر پیدا وار ٹیکس بھی نہیں لے رہے ہیں جبکہ ہم نے اس کے لئے اس بجٹ میں 600 ارب کا بجٹ رکھا ہے، لیکن ہم نے اور وزیر اعظم نے اس کی پرواہ نہیں کی۔ وزیر اعظم نے کہا کہ ہم لوگوں لوگوں پر مزید بوجھ نہیں ڈال سکتے۔ یہ دکھاتا ہے کہ موجودہ حکومت غریبوں کے لئے کیا سوچتی ہے۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: