اپنا ضلع منتخب کریں۔

    سیاسی صورتحال پر پاکستان کے اعلیٰ فوجی دستوں کی رائے منقسم! جلد ہوسکتا ہے نئے آرمی چیف کا انتخاب

    ستمبر میں سابق وزیر اعظم عمران خان نے کہا تھا کہ سی او ایس جنرل باجوہ کو نئی حکومت کے منتخب ہونے تک توسیع دی جانی چاہیے۔

    ستمبر میں سابق وزیر اعظم عمران خان نے کہا تھا کہ سی او ایس جنرل باجوہ کو نئی حکومت کے منتخب ہونے تک توسیع دی جانی چاہیے۔

    اجلاس میں پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کی قیادت سے رابطے میں رہنے کا فیصلہ بھی کیا جائے گا۔ ایک اعلیٰ فوجی ذرائع کے مطابق 8 نومبر کو 253 ویں کور کمانڈرز کانفرنس (CCC) میں ملک کی موجودہ سیاسی صورتحال پر اعلیٰ فوجی جرنیلوں کی رائے واضح طور پر منقسم نظر آئی۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Pakistan
    • Share this:
      پاکستان کے آرمی چیف جنرل باجوہ 29 نومبر کو ریٹائر ہونے والے ہیں۔ اسی ضمن میں ذرائع نے سی این این نیوز 18 کو بتایا ہے کہ پاکستان کے اعلیٰ عسکری رہنما موجودہ سیاسی صورتحال پر منقسم ہیں اور اسی تناظر میں وزیراعظم شہباز شریف اچانک دورے پر لندن پہنچ گئے ہیں۔ ذرائع کے مطابق شہباز شریف COP27 مصر کا دورہ مکمل کرنے کے بعد نجی دورے پر لندن روانہ ہوئے۔ وہ اس ماہ چیف آف آرمی اسٹاف (COAS) کی تقرری پر پاکستان مسلم لیگ نواز (PML-N) کے سربراہ اور اپنے بھائی نواز شریف کے ساتھ لندن میں اہم مشاورت کریں گے۔

      ذرائع نے دعویٰ کیا کہ وزارت دفاع نے نئے سی او اے ایس کی تقرری کے لیے سمری تیار یا منتقل نہیں کی ہے۔ اجلاس کے ایجنڈے میں عمران خان کا حقیقی آزادی مارچ، اعلیٰ فوجی (آئی ایس آئی) کے جرنیلوں خصوصاً میجر جنرل (ڈی جی-آئی ایس آئی) فیصل نصیر اور ان کے سیکٹر کمانڈر بریگیڈیئر فہیم، ملک کی موجودہ سیاسی ب معاشی صورتحال شامل ہوگا۔

      اعلیٰ فوجی حکام نے عمران خان پر حملے اور ملک گیر احتجاج کے بعد کی صورتحال کا بھی جائزہ لیا۔ شرکاء نے موجودہ اندرونی اور بیرونی سیکیورٹی صورتحال اور فوج کی آپریشنل تیاریوں کا جامع جائزہ لیا۔ باجوہ 29 نومبر کو ریٹائر ہونے والے ہیں اور انہوں نے توسیع نہیں مانگی ہے۔ نیوز 18 نے اطلاع دی تھی کہ لیفٹیننٹ جنرل عاصم منیر، لیفٹیننٹ جنرل ساحر شمشاد اور لیفٹیننٹ جنرل نعمان ملازمت کی دوڑ میں شامل امیدواروں میں شامل ہیں۔

      یہ بھی پڑھیں: 


      اجلاس میں پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کی قیادت سے رابطے میں رہنے کا فیصلہ بھی کیا جائے گا۔ ایک اعلیٰ فوجی ذرائع کے مطابق 8 نومبر کو 253 ویں کور کمانڈرز کانفرنس (CCC) میں ملک کی موجودہ سیاسی صورتحال پر اعلیٰ فوجی جرنیلوں کی رائے واضح طور پر منقسم نظر آئی۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: