اگلے مہینے سے اقوام متحدہ کی عمارت پر فلسطینی پرچم بھی لہرائے گا

برسوں کی کوششوں کے بعد آخر کار فلسطینیوں اور عالم عرب کا فلسطینی پرچم اقوام متحدہ کی عمارت پرلہرائے جانے کا خواب اگلے مہینے پورا ہونے جارہا ہے

Aug 21, 2015 12:27 AM IST | Updated on: Aug 21, 2015 12:27 AM IST
اگلے مہینے سے اقوام متحدہ کی عمارت پر فلسطینی پرچم بھی لہرائے گا

نیویارک : برسوں کی کوششوں کے بعد آخر کار فلسطینیوں اور عالم عرب کا فلسطینی پرچم اقوام متحدہ کی عمارت پرلہرائے جانے کا  خواب اگلے مہینے پورا ہونے جارہا ہے  ۔ اس خواب کی تعبیر دیکھنے کیلئے  فلسطینی اور عرب یکساں طور پر بےقرار تھے۔

خبروں کے مطابق اگلے مہینے اقوام متحدہ کی عمارت پر لہرانے والے مکمل رکنیت کے حامل ملکوں کے پرچموں کے ساتھ دو مشاہد ملکوں کے پرچم بھی لہرائے جائیں گے جو یقیناً ایک تاریخی لمحہ ہو گا۔

یوں تو دنیا میں پرچموں کے استعمال کی تاریخ 350 سال قبل مسیح پرانی ہے۔ تاہم وقت گزرنے کے ساتھ ساتھ پرچموں کی ہیئت اور شکل و صورت تبدیل ہوتی رہی  یے ، جو متعلقہ ملک کے عوام کی قومی امنگوں کی ترجمانی کرتی تھی۔

قابل ذکر ہے کہ اقوام متحدہ کی عمارت پر صرف ووٹنگ کا حق رکھنے والے ارکان ممالک کا ہی پرچم لہرایا جاتا ہے مگر یہ روایت اب جلد ہی بدلنے والی ہے۔

Loading...

ایک ویب پورٹل کی خبر کے مطابق اس تبدیلی کے منصوبے کی بنیادی بننے والے مسودہ کو  فلسطین نے تیار کیا  ہے، جسے یو این سیکیورٹی کونسل میں شامل عرب لیگ کے رکن ممالک نے منظور کرایا ہے۔ اس مسودے کے مطابق یو این میں مبصر کا درجہ رکھنے والے دو ملکوں ویٹی کن اور فلسطین کے پرچم بھی مکمل رکنیت رکھنے والے ممالک کے پرچموں کے ساتھ لہرائے جا سکیں گے۔

Loading...