ہوم » نیوز » عالمی منظر

پٹھان کوٹ حملے کا ماسٹر مائنڈ مسعود اظہر پاکستان میں گرفتار ، ہندستان کے پاس سرکاری اطلاع نہیں

اسلام آباد: پٹھان کوٹ حملے میں پاکستان نے اب تک کی سب سے بڑی کارروائی کرتے ہوئے ماسٹر مائنڈ مولانا مسعود اظہر کو گرفتار کر لیا ہے۔ مسعود اظہر جیش محمد کا سربراہ ہے۔تاہم فی الحال اس بات کی سرکاری طور پر تصدیق نہیں کی جا سکی ہے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق مسعود اظہر کو گرفتار کرکے نامعلوم جگہ پر رکھا گیا ہے۔

  • News18
  • Last Updated: Jan 13, 2016 10:28 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
پٹھان کوٹ حملے کا ماسٹر مائنڈ مسعود اظہر پاکستان میں گرفتار ، ہندستان کے پاس سرکاری اطلاع نہیں
اسلام آباد: پٹھان کوٹ حملے میں پاکستان نے اب تک کی سب سے بڑی کارروائی کرتے ہوئے ماسٹر مائنڈ مولانا مسعود اظہر کو گرفتار کر لیا ہے۔ مسعود اظہر جیش محمد کا سربراہ ہے۔تاہم فی الحال اس بات کی سرکاری طور پر تصدیق نہیں کی جا سکی ہے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق مسعود اظہر کو گرفتار کرکے نامعلوم جگہ پر رکھا گیا ہے۔

اسلام آباد: پٹھان کوٹ حملے میں پاکستان نے اب تک کی سب سے بڑی کارروائی کرتے ہوئے ماسٹر مائنڈ مولانا مسعود اظہر کو گرفتار کر لیا ہے۔ مسعود اظہر جیش محمد کا سربراہ ہے۔تاہم فی الحال اس بات کی سرکاری طور پر تصدیق نہیں کی جا سکی ہے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق مسعود اظہر کو گرفتار کرکے نامعلوم جگہ پر رکھا گیا ہے۔


ادھر ہندوستان نے مسعود اظہر کو حراست میں لیے جانے کی سرکاری اطلاع ہونے سے انکار کیا ہے۔ وزارت خارجہ کے ترجمان وکاس سوروپ نے کہا کہ مولانا مسعود اظہر کی گرفتاری کی ہندستان کو کوئی سرکاری اطلاع نہیں ہے۔ پاکستانی میڈیا میں ایسی خبریں آئیں ہیں کہ مولانا مسعود اظہر، اس کے بھائی اور جیش محمد کے کچھ دہشت گردوں کو حراست میں لیا گیا ہے۔


اس سے پہلے خارجہ سکریٹری سطح کی بات چیت کا مستقبل پٹھان کوٹ دہشت گردانہ حملے کو لے کر اسلام آباد کی 'فوری اور فیصلہ کن کارروائی پر منحصر ہونے کی بات ہندوستان کی جانب سے دو ٹوک کہے جانے کے بعد پاکستان نے اس حملے کی مبینہ طور پر سازشی جیس محمد سے وابستہ کئی افراد کو حراست میں لیاتھا اور اس تنظیم کے دفاتر کو سیل کر دیا تھا۔ علاوہ ازیں پاکستان اپنی ایک خصوصی تفتیشی ٹیم بھی پٹھان کوٹ بھیجنے پر بھی غور کر رہا ہے ، کیونکہ ہندوستان کے ساتھ تعاون کے عمل کو آگے بڑھانے کے لئے مزید معلومات درکار ہوں گی۔


قابل ذکر ہے کہ پاکستان کی جانب سے یہ کارروائی ایسے وقت میں کی گئی ہے جب ہندوستان کے خارجہ سکریٹری ایس جے شنكر کے اسلام آباد جانے میں صرف دو دن باقی رہ گئے ہیں۔ وزیر اعظم نواز شریف کی صدارت میں اعلی سطحی میٹنگ میں بھی پاکستان کی کارروائی کا جائزہ لیا گیا ۔


بتا دیں کہ پٹھان کوٹ حملے کے بعد ہندستان نے دہشت گردوں سے منسلک ثبوت پاکستان کو سونپے تھے۔ اس میں ان کے صوتی نمونے اور ان کے پہنے جوتے، ہتھیار شامل تھے۔ مانا جا رہا ہے کہ انہی ثبوتوں کی بنیاد پر جیش محمد کے تین دہشت گردوں کو گرفتار کیا گیا ہے۔


ہندستان کے ثبوتوں پر پاکستان سے کارروائی کی یقین دہانی کرائی گئی ہے۔ نواز شریف نے اسے لے کر اعلی سطحی میٹنگ بھی کی تھی۔ انہوں نے خود مودی کو فون کر کارروائی کی یقین دہانی کرائی تھی۔ ہندستان نے واضح کر دیا ہے کہ ٹھوس کارروائی نہ ہونے تک پاکستان سے بات چیت نہیں ہوگی۔ تاہم ابھی تک مذاکرات منسوخ کرنے کا اعلان نہیں ہوا ہے۔

First published: Jan 13, 2016 06:55 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading